ناقص گوشت کی فروخت کے خلاف کاروائی، مارکیٹ کمیٹی عملہ کا پولیس پر دھاوا، گرفتار دکاندار چھڑا لئے

ناقص گوشت کی فروخت کے خلاف کاروائی، مارکیٹ کمیٹی عملہ کا پولیس پر دھاوا، ...

  

 لاہور( جاوید اقبال) سستے رمضان بازاروں میں مردہ اور نیم مردہ کم عمر لاغر مرغیوں کے گوشت کی فروخت عروج پر پہنچ گئی ہے ۔ یہ مرغیاں مختلف فارموں اور تھوک منڈیوں سے حاصل کی جاتی ہیں جس کا گوشت بنا کر فریجوں میں لگا کر تندرست گوشت میں مکس کرکے چکن فروش فروخت کر رہے ہیں۔ شمالی لاہور میں قائم سستے بازار سے مردہ مرغیوں کے گوشت کی فروخت تھانہ شالیمار کے عارف نامی (ر) ایس آئی نے پکڑلی مگر ما رکیٹ کمیٹیوں کیاہلکاروں دلشاد ، سلیم صدیقی وغیرہ نے دیگر عملے کے ہمراہ پولیس اہلکاروں پر دھاوا بول کر مردہ گوشت اور فروخت کرنے والوں کو چھڑا لیا جس کی تصدیق اسٹال ہولڈرز نے کی ہے جن کا کہنا ہے کہ ضلعی انتظامیہ جس طرح سے سستا گوشت فروخت کر رہی ہے مگر بیمار لاغر اور مردہ مرغیوں کے گوشت کی آمیزش نہ کی جائے تو مارکیٹ سے سستے ریٹ پر گوشت فروخت نہیں کیا جا سکتا۔ بتایا گیا ہے کہ شہر میں لگائے گئے سستے رمضان بازاروں میں کم عمر لاغر نیم مردہ اور مردہ مرغیوں کا گوشت فروخت کیا جا رہا ہے، جس کا انکشاف پاکستان ویلفیئر کونسل کی طرف سے وزیر اعلیٰ کو لکھے گئے خط میں کہا ہے جس میں چیئرمین حاجی غلام حسین میاں کی طرف سے انکشاف کیا گیا ہے کہ سستے رمضان بازاروں میں بغیر مردہ اور مردہ مرغیوں کا گوشت فروخت کیا جا رہا ہے جبکہ کم عمر چوزوں کا گوشت بھی فروخت ہو رہا ہے جس کی بنیادی وجہ مارکیٹ سے کم قیمت پر گوشت فروخت کر کے حکومت سے شاباش لینا ہے مراسلہ میں کہا گیا ہے کہ ہر مکروہ دھندہ میں ٹاؤن انتظامیہ برابر کی شریک ہے جو حصہ لے رہی ہے ۔ خط میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ مکروہ دھندہ کرنے کے لئے اسٹال ہولڈرز ٹولنٹن مارکیٹ، بادامی باغ مارکیٹ اور سرکلر روڈ سمیت جہاں مرغیاں لانے والوں سے ایسی مرغیاں حاصل کرتے ہیں اور یہ مردہ گوشت تندرست گوشت میں مکس کر کے فروخت کیا جا رہا ہے اور یہ گوشت ایسے لوگوں کو دیا جاتا ہے جو جلدی میں گوشت لینے کے خواہش مندہوتے ہیں۔ عام گاہکوں کو بھی مکس کر کے گوشت دیا جاتا ہے۔ اس حوالے سے ڈی سی او لاہور کیپٹن (ر) عثمان کا کہنا ہے کہ معاملے کی تحقیقات کرائیں گے اور ٹاؤنوں اور لائیو سٹاک کی انتظامیہ سے جواب طلب کیاجائے گا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -