برطانیہ کی سب سے بڑی یونین نے ’بائیکاٹ اسرائیل‘ مہم کی حمایت کر دی

برطانیہ کی سب سے بڑی یونین نے ’بائیکاٹ اسرائیل‘ مہم کی حمایت کر دی
 برطانیہ کی سب سے بڑی یونین نے ’بائیکاٹ اسرائیل‘ مہم کی حمایت کر دی

  

لندن (نیوز ڈیسک) اسرائیل کی طرف سے فلسطینیوں کے سفا کانہ قتل عام پر مغربی ممالک میں بھی عوامی سطح پر اظہار نفرت شروع ہو گیا ہے اور ان ممالک کی حکومتوں کی اسرائیل کیلئے محبت کے باوجود عام لوگ اسرائیل سے نفرت کا اظہار کر رہے ہیں۔ حال ہی میں برطانیہ کی سب سے بڑی یونین یونائیٹ(UNITE)نے اسرائیل کے خلاف بائیکاٹ اور پابندیوں کی تحریک BDSکی بھر پور حمایت کا اعلان کر دیا ہے۔

اس تنظیم نے پچھلے ہفتہ برطانیہ کی لیبرپارٹی کیلئے مالی مددکا اعلان بھی کیا تھا اور اور اس پارٹی کے رہنما ایڈورڈیلی بنیڈ کی اسرائیل کیلئے کھلی حمایت کے باوجود یونائٹ نے اسرائیل کی مخالفت کا فیصلہ کیا ہے ۔Bتحریک کا موقف ہے کہ اسرائیل کی پراڈکٹس کا بائیکاٹ کیا جائے ،اسرائیل میں سرمایہ کاری نہ کی جائے اور اس پر پابندیاں لگائی جائیں کیونکہ یہ ملک مظلوم فلسطینیوں کے قتل عام میں مصروف ہے اور فلسطینی عوام کو ان کے گھروں سے بے دخل کرنے کے بعد ان کی زمینوں پر قبضہ کر چکا ہے۔یہ تحریک آزاد فلسطینی ریاست کے قیام کیلئے بھی سرگرم ہے اور دنیا کے متعدد ممالک میں اسرائیل کے خلاف حمایت منظم کر رہی ہے۔واضح رہے کہ جہاں عوامی سطح پر کسی حد تک اسرائیل کے مظالم کے خلاف آواز اٹھائی جاتی ہے وہیں مغربی ممالک کی حکومتیں بیک زبان اسرائیل کی حمایت کر رہی ہیں اور اپنی عوام کو بھی مجبور کر رہی ہیں کہ وہ اسرائیلی ظلم و جبر پر آنکھیں کان بند رکھیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -