مجرم اعظم آگئے اب 300ارب روپے واپس کر دیں : عمران خان

مجرم اعظم آگئے اب 300ارب روپے واپس کر دیں : عمران خان

تباسلام آباد، لاہور (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں)تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہاہے مجرم اعظم آگئے ہیں، میاں صاحب اب 300 ارب روپے واپس کر دیں۔اسلام آباد کے علاقے کراچی کمپنی میں خطاب، غیر ملکی خبر رساں ادارے کو انٹرویو اور سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئیٹر پر اپنے پیغام میں عمران خان نے کہا تبدیلی آگئی ہے جو تبدیلی رہ گئی وہ 25 جولائی کو آجا ئیگی، وہ کرپشن پر قابو پانے کیلئے نیب کو مضبوط اور ٹیکس چوروں کو ایف آئی اے اور نیب کے حوالے کریں گے۔انہوں نے دعویٰ کیا وہ 8 ہزار ارب روپے پاکستان کے خزانے میں اکٹھا کرکے دکھائیں گے۔ خیبرپختونخوا میں ان کی حکومت نے تعلیم اور صحت کیلئے جو کام کیے وہ ملک بھر میں کریں گے۔ انہوں نے کے پی میں کرپشن اور سفارش ختم کی۔ اللہ قوم کو قسمت بدلنے کا موقع بار بار نہیں دیتا کیونکہ پہلے ایک جاتا تھا تو دوسرا آجاتا تھا۔عمران خان نے کہا ہے 25جولائی کو ہو نیوالے عام انتخابات میں فتح کا مکمل یقین ہے،وزیراعظم بننے پر انسداد کرپشن مہم کے اپنے وعدوں کا جزوی نمونہ پیش کروں گا، چین کی طرح غربت میں کمی کے پروگرام پر عمل کیا جائے گا اور اس سلسلے میں ہم نے چینی حکام سے ملاقاتیں کی ہیں، امریکی فوج جتنا عرصہ افغا نستا ن میں رہیں گی سیاسی مصالحت کے مواقع اتنے ہی کم ہو نگے،انتخابات میں کامیابی کیلئے پرامید ہیں اور ابھی میچ ختم نہیں ہوا جب تک آ خر ی بال نہ ہو۔ کرپٹ سیاستدانوں کیخلاف ہر مرتبہ احتساب کا عمل روکا گیا تا ہم اب عوام سیاسی جماعتوں کے کرپٹ سربراہان کے احتسا ب کا مطالبہ کر رہے ہیں۔عمران خان نے انتخابی مہم میں سازگار ماحول فراہم نہ کیے جانے کے الزام کی تردید کی،بعدازاں اپنے ایک ٹوئٹ پیغام میں چیئرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا نواز شریف پر جب بھی برا وقت آتا ہے تو پاکستان کی سرحد پر کشیدگی بڑھ جاتی ہے۔دہشت گردی کے واقعات اور سرحدوں پر کشیدگی بڑھ جانا کیا محض اتفاق ہے؟۔عمران خان کا کہنا تھاانتخابات کو سبوتاژ کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔انہوں نے بنوں میں سابق وزیر اعلیٰ اکرم درانی کے قافلے اور مستونگ میں بی اے پی کے کی انتخابی کارنر میٹنگ میں خود کش حملوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا یہ سراسر 25جولائی کو ہونیوالے انتخابات سبوتاژ کر نے کی سازش ہے لیکن عوام ان تاریخی انتخابات کو سبوتاژ کرنے کی ہر سازش ناکام بنادیں گے۔ اکرم درانی کی سلامتی کی اطلاع باعث اطمینان ہے، تاہم مستونگ میں بی اے پی کے رہنماسراج رئیسانی سمیت 35قیمتی جانوں نے نقصان پر انتہائی دکھ اور افسوس ہے ،اللہ سے دعا ہے وہ جاں بحق افراد کے درجات بلند ، زخمیوں کو جلد صحت یاب فرمائے ،انکا کہنا تھا انتخابات جیسے اہم ترین مرحلے کے دوران دشمن عدم استحکام کا خواہاں ہے، پرامن ماحول میں غیرجانبدارانہ انتخابات پاکستان کے مستقبل کیلئے نہایت اہم ہیں۔ نگراں حکومتیں امیدواروں کی سلامتی اور مجموعی طور پر امن عامہ کے تحفظ کو اہم ترین ترجیح بنائیں، کسی کو فساد برپا کرنے کا موقع فراہم نہ کیا جائے۔پشاور ، بنوں اور مستونگ میں جمہوریت کیلئے جانیں دینے والوں کی قربانیاں رائیگاں نہیں جائینگی ۔، نوجوان بے روزگار ہیں ، باریاں لینے والوں نے ملک کو مسائل کے علاوہ کچھ نہیں دیا ،قرضوں کی وجہ سے غریب طبقے کے مسائل بڑھ رہے ہیں ، آمدن میں اضافہ اور کرپشن کا خاتمہ ہماری اولین ترجیح ہے، ہم ملک میں ٹیکنیکل کالجز بنائیں گے اور بیروزگاری کا بڑا مسئلہ حل کریں گے ، پانی کمی کا مسئلہ حل کرنا منشور کا حصہ ہے ، ملک کے سرکاری ہسپتالوں کو بہتر کریں گے، پاکستان کو اپنے پیروں پر کھڑا کرکے دکھاں گا، وقت آگیا ہے25جولائی کو گھروں سے نکلو، باربار موقع نہیں ملتا۔ انہوں نے کہا بار بار باریاں لینے والوں سے پوچھو آپ نے ملک قرضوں کی دلدل میں دھکیل دیا ہے ، پرانی جماعتوں نے 6ہزار ارب کے قرضے لئے ۔ سپریم کورٹ نے مجھے صادق وامین قراردیا ہے۔قرضوں کی وجہ سے غریب طبقے کے مسائل بڑھ رہے ہیں ، آمدن میں اضافہ اور کرپشن کا خاتمہ ہماری اولین ترجیح ہے ،خدا نے قوم کی تقدیر بدلنے کا موقع دیا ہے نظریے کو کامیاب کریں ۔

مزید : صفحہ اول