ایم ایم اے کی حکومت میں حقیقی معنوں میں بلا تفریق کھڑا احتساب کیا جائیگا :مشتاق احمد

ایم ایم اے کی حکومت میں حقیقی معنوں میں بلا تفریق کھڑا احتساب کیا جائیگا ...

نوشہرہ(بیورورپورٹ) جماعت اسلامی کے صوبائی امیر سینیٹر مشتاق احمد خان اور متحدہ مجلس عمل کے صوبائی رہنما ،پی کے 61 سے نامزد امیدوار حاجی عنایت الرحمن نے کہا ہے کہ ایم ایم اے واحد پانچ دینی جماعتوں پر مشتمل سیاسی اتحاد ہے جو ملک میں شرعی قوانین کے نفاذ کرکے ملک سے حقیقی معنوں میں کرپشن کا خاتمہ کرے گی ہے ایم ایم اے کی حکومت بن جانے کے بعد حقیقی معنوں میں بلاتفریق کھڑا احتساب ہو گا ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایک بہت بڑی موٹرسائیکل ریلی جو پی کے 61 کے مختلف علاقوں جن میں پیرسباق، زڑہ مینہ، ترلاندی، مصری بانڈہ اور دیگر علاقوں سے گزرتا ہوا مختلف مقامات پر اجتماعات سے خطاب بھی کیا ریلی میں ہزاروں کی تعداد میں نوجوانوں اور عوام نے بھرپور شرکت کی راستے میں عوام نے ان کا بھرپور استقبال بھی کیا اس موقع پر پی ٹی آئی کے درجنوں عہدیداروں اور کارکنوں نے مستعفی ہوکر متحدہ مجلس عمل میں شمولیت کابھی اعلان کیا عوام نے پرجوش ہوکر ایم پی اے عنایت الرحمن کے نعرے لگائیں ریلی کی قیادت جماعت اسلامی کے صوبائی امیر سینیٹر مشتاق احمد خان،حاجی عنایت الرحمن اور این اے 25 کے نامزدامیدوار پیرذوالفقار باچا نے کی ریلی سے ایم ایم اے کے قائدین جماعت اسلامی کے صوبائی امیر سینیٹر مشتاق احمد خان اورعنایت الرحمن نے کہا کہ 70سالوں میں کسی نے بھی پاکستان کی ترقی اور عوام کی فلاح کیلئے کام نہیں کیا بلکہ اشرافیہ کرپشن اور لوٹ مار میں ملوث رہی ہے انہوں نے کہا کہ ایم ایم اے کی سابقہ حکومت نے ملک میں شریعت کے نفاذ کیلئے بھر پور کردار ادا کیا تھا لیکن اس وقت کی وفاقی حکومت نے ہمارا ساتھ نہیں دیا تھا لوڈشیڈنگ اور بیروز گاری ہمارے ملک کا سب سے بڑا مسلہ ہے اور یہ مسلہ صرف ایم ایم اے ہی حل کر سکتی ہے انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ تحریک انصاف کی سابقہ حکومت نے پشاور سمیت خیبرپختونخوا کا بیڑا عرق کرکے کھنڈرات میں تبدیل کردیا خیبرپختونخوا کو 300 ارب روپے کا مقروض بنادیا ہے اور کوئی بھی قابل ذکر ترقیاتی منصوبہ نہیں کیا پرویز خٹک کو بہت جلد کرپشن کے الزام میں جیل جانا پڑے گا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...