کے پی فوڈ اتھارٹی کی خیبر تدریسی ہسپتال میں کارروائی

کے پی فوڈ اتھارٹی کی خیبر تدریسی ہسپتال میں کارروائی

پشاور (سٹی رپورٹر) خیبرپختونخوا فوڈ سیفٹی اینڈ حلال فوڈ اتھارٹی نے گزشتہ روز خیبرتدریسی ہسپتال میں تادیبی کاروائی کرتے ہوئے غیرقانونی طور پر دوبارہ فعال کئے گئے تمام کینٹینوں کو ایک مرتبہ پھر سیل کردیا۔ ترجمان کے پی فوڈ اتھارٹی کے مطابق اتھارٹی کو میڈیا نمائندوں کے زرعیے مع؛لومات موصول ہوئیں کہ پرسوں سربہمر کئے گئے تمام کینٹین غیرقانونی طور پر فعال ہوچکے ہیں اورہسپتال کے مریضوں کو مضر صحت کھانوں کی فراہمی جاری کئے ہوئے ہیں۔اس اطلاع پر ڈپٹی ڈائریکٹر آُریشن شاہانہ خلیل نے اسسٹنٹ ڈائریکٹر انیلا محبوب اور سائرہ نثار کی ٹیموں کے ہمراہ کاروائی کرتے ہوئے تمام کینٹینوں کو دوبارہ سیل کردیا جبکہ پکے پکائے مینو کو قبضے میں لیکر تلف کردیا۔ ترجمان کا مزید کہنا تھا کہ فوڈ سیفٹی ایکٹ کی خلاف ورزی کرنے والوں کیساتھ آہنی ہاتھوں نمٹا جائے گا اور کسی کو بھی قانون ہاتھ میں لینے کی اجازات نہٰں دی جائیگی۔ مزید برآں کسی کو بھی یہ اجازات نہیں کہ وہ اتھارٹی کے سیل کردہ عمارت کو خود سے کھولے۔ ڈائریکٹر جنرل کے پی فوڈ اتھارٹی ریاض خان محسود نے کاروائی سے متعلق بات کرتے ہوئے کینٹین مالکان کو خبردار کیا ہے کہ کے پی فوڈ اتھارٹی کے کاروائیوں کو مزاق نہ سمیجھیں اور اتھارٹی کے پاس اختیار ہے کہ کسی بھی روزگار کو پختونخوا میں مستقل طور پر بند کرے جبکہ ایسے عناصر کیخلاف سخت قانونی کاروائی کی جائیگی جو اتھارٹی کی قانونی کاروائی کی راہ میں روڑے اٹکارہے ہو۔

مزید : پشاورصفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...