سورج غروب ہونے سے قبل ہی اڈیالہ جیل میں نوازشریف سے ملنے کون پہنچ گیا؟راولپنڈی سے خبرآگئی

سورج غروب ہونے سے قبل ہی اڈیالہ جیل میں نوازشریف سے ملنے کون پہنچ ...
سورج غروب ہونے سے قبل ہی اڈیالہ جیل میں نوازشریف سے ملنے کون پہنچ گیا؟راولپنڈی سے خبرآگئی

  

راولپنڈی (ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق وزیراعظم نوازشریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز نے اڈیالہ جیل میں قید کا پہلا دن گزارا، کوئی بڑا لیگی رہنماءتو ملاقات کیلئے ان کے پاس نہ پہنچا البتہ قانونی ٹیم مشاورت کیلئے اڈیالہ جیل میں پہنچ گئی اور جیل سپریٹنڈنٹ کی موجود گی میں پانچ منٹ جاری رہی ۔

ایکسپریس ٹربیون کے مطابق جیل میں نوازشریف سے ملاقات کرنیوالی لیگی ٹیم نے کہا ہے کہ مریم نوازاور نوازشریف کو لاہورایئرپورٹ سے ہی گرفتار کرکے جیل بھیجا گیا، انہیں صرف پانچ منٹ ہی سابق وزیراعظم سے ملاقات کی اجازت دی گئی، وکلاءنے تصدیق کی ہے کہ نوازشریف کو جیل میں بیڈ یا اے سی فراہم نہیں کیاگیا ۔ ذرائع نے بتایاکہ سعد ہاشمی کی سربراہی میں لیگل ٹیم نوازشریف سے ملاقات کیلئے پہنچی تاکہ نوازشریف سے دستخط کرائے جاسکیں اور اسلام آباد ہائیکورٹ میں اپیل دائر کی جاسکے ، نوازشریف کو پڑھنے کے لیے اخبارتک نہیں دیاگیااور نوازشریف کا بیڈصرف ایک گدے پر مشتمل ہے جبکہ واش روم کی حالت بھی انتہائی ابترتھی۔

یہ بھی انکشاف ہوا ہے کہ لیگل ٹیم کو مریم نواز سے ملاقات کی اجازت نہیں دی گئی تاہم مریم کے وکیل امجد پرویز کو اجازت دی گئی کہ وہ اپنی موکلہ سے مل سکتے ہیں۔یادرہے کہ گزشتہ شام نوازشریف اور مریم نواز کو لاہور ایئرپورٹ سے گرفتار کرکے اڈیالہ جیل منتقل کیاگیا، ابتدائی طورپر نیب نے دونوں مجرموں کو احتساب عدالت میں پیش کرنا تھا تاکہ باضابطہ طورپر ان کی سزاشروع ہوسکے لیکن سیکیورٹی خدشات کی وجہ سے احتساب عدالت نے نیب کی استدعا منظورکرتے ہوئے حکم دیا ہے کہ سیدھا جیل ہی لے جائیں ۔

مزید : قومی