مجھے کہا گیا کہ میری جان کوسب سے زیادہ خطرہ ہے،ہم دھماکوں کے باوجود کوئی جلسہ منسوخ نہیں کریں گے: عمران خان 

Jul 14, 2018 | 18:33:PM

صوابی (ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ مجھے کہا گیا کہ میری جان کوسب سے زیادہ خطرہ ہے،صوابی،مردان اور ٹیکسلا کا جلسہ منسوخ کردو، اگر خطرہ ہے توکیا بنی گالہ سے باہرنہ نکلوں؟ہم دھماکوں کے باوجود کوئی جلسہ منسوخ نہیں کریں گے،جلسے منسوخ کردیتا ہوں توکس کوفائدہ ہوگا؟بم دھماکے باہرسے سازش ہورہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق عمران خان کا گوہاٹی سٹیڈیم میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ مستونگ میں دہشت گردی پر بہت دل خراب ہوا،نواب سراج رئیسانی محب وطن پاکستانی تھے،بم دھماکوں کی سازش ملک سے باہرہوتی ہے،ملک کے اندروالیساتھ دیتے ہیں۔ایسے لوگوں کولیڈرنہ مانیں جس کے اثاثے بیرون ملک پڑے ہیں،کچھ لوگ چاہتے ہیں پاکستان میں فساد ہوالیکشن میں لوگ نہ نکلیں۔انہوں نے کہاکہ نوازشریف خاندان کابزنس کرپشن تھا،نواز،زرداری حکومت میں نااہل لوگوں کواداروں کے اہم عہدوں پرلگایا گیا،زرداری 35 ارب کے منی لانڈرنگ سکینڈل میں ملوث ہیں،زرداری بتائیں ان کے پاس پیسے کہاں سے آئے؟جبکہ میرا ایک روپیہ پاکستان سے باہرنہیں ہے۔

کپتان نے مزید کہا کہ کس نے میاں صاحب کوکہا کہ واپس آجاؤ؟شہبازشریف نے نوازشریف کوکہا واپس آئیں لاکھوں لوگ استقبال کیلئے نکلیں گے ، نوازشریف شہبازشریف کے کہنے پرواپس آگیالیکن شہبازشریف آپ کے لیے اچھی خبرنہیں کیونکہ آپ کوبھی نوازشریف کے ساتھ اڈیالہ جانا ہے۔

مزیدخبریں