سانحہ مستونگ کی تحقیقات میں اہم پیشرفت،حملہ آورکے 2 سہولت کارگرفتار

سانحہ مستونگ کی تحقیقات میں اہم پیشرفت،حملہ آورکے 2 سہولت کارگرفتار
سانحہ مستونگ کی تحقیقات میں اہم پیشرفت،حملہ آورکے 2 سہولت کارگرفتار

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) سیکیورٹی اداروں نے سانحہ مستونگ کے مبینہ خود کش حملہ آور کے 2 سہولت کار گرفتار کرلئے ہیں۔

نجی ٹی وی نے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ سیکیورٹی فورسز نے سانحہ مستونگ کے مبینہ خود کش حملہ آور کے 2 سہولت کاروں کو گرفتار کرلیا ہے۔خود کش حملہ آور دھماکے سے 2روز قبل افغانستان سے چاغی پہنچا ،جہاں سہولت کاروں نے اسے اپنے پاس ٹھہرایا ۔ذرائع کے مطابق سراج رئیسانی کے جلسے میں مبینہ دہشت گرد پہلی صف میں بیٹھا تھا ،سہولت کاروں سے اس حوالے تفتیش جاری ہے۔واضح رہے کہ گذشتہ روز کوئٹہ سے 35 کلو میٹر دور مستونگ کے علاقے درینگڑھ  میں بلوچستان عوامی پارٹی کے جلسے میں ہونے والے خوفناک خود کش حملے میں سراج رئیسانی سمیت اب تک  197 افراد شہیدجبکہ 150 سے زائد زخمی ہوگئے تھے ۔نواب زادہ سراج رئیسانی بلوچستان عوامی پارٹی کے امیدوار تھے اور حلقہ پی بی 35 مستونگ سے الیکشن میں حصہ لے رہے تھے جب کہ وہ سابق وزیراعلیٰ بلوچستان اسلم رئیسانی کے چھوٹے بھائی تھے۔

مزید : قومی