کراچی،وائی ایم سی اے گراؤنڈ پر 17سال بعد کھیلوں کی سرگرمیاں بحال

کراچی،وائی ایم سی اے گراؤنڈ پر 17سال بعد کھیلوں کی سرگرمیاں بحال

کراچی(صباح نیوز)کراچی کا سو سالہ قدیم گراؤنڈ  وائی ایم سی اے (ینگ مین کرسچیئن ایسوسی ایشن) قبضہ مافیا سے خالی ہوا تو سترہ سال کے طویل وقفے کے بعد وہاں کھیلوں کی سرگرمیاں  بھی دوبارہ شروع ہوگئی ہیں۔وائی ایم سی اے گراونڈ سے اولمپئنز سہیل عباس، منصوراحمد مرحوم اور شاہد علی خان جیسے مایہ ناز کھلاڑی پاکستان ہاکی کو ملے۔گراونڈ کو سپریم کورٹ کے حکم پر کراچی سٹی ہاکی ایسوسی ایشن اور ڈپٹی کمشنرساتھ کی کوششوں سے خالی کرایا گیا۔سٹی ہاکی ایسوسی ایشن کے سیکریٹری حیدر حسین کا کہنا ہیکہ  گراؤنڈ خالی کرانے کے باوجود پریشانی کا سامنا کرنا پڑا۔ سیکریٹری اسپورٹس وائی ایم سی اے بابرپال کا کہناہے کہ  17 سال میں اس گراؤنڈ کا حال خراب ہوگیا ہے لیکن محدود وسائل کے باوجود کھیلوں کی سرگرمیاں شروع کردی گئی ہیں۔وائی ایم سی اے کے اسسٹنٹ سیکریٹری پاسٹر ولیمز کا کہنا ہے کہ قابضین نے گراؤنڈ کو بہت نقصان پہنچایا ہم اسے اصل شکل میں لانے کی کوشش کررہے ہیں۔کراچی سٹی ہاکی ایسوسی ایشنز کیعلاوہ کھیلوں کی دیگر ایسوسی ایشنز سے وابستہ افراد نیتاریخی اور قدیم گرانڈ میں سترہ سال بعد کھیلوں کی سرگرمیاں شروع ہونے کو خوش آئند قرار دیا ہے۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی