نئے پاکستان میں کرپشن نہ کرپٹ عناصر کی گنجائش ہے: میاں اسلم اقبال

نئے پاکستان میں کرپشن نہ کرپٹ عناصر کی گنجائش ہے: میاں اسلم اقبال

  

لاہور(لیڈی رپورٹر) صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال نے اپنے کیمپ آفس آمد کے موقع پر لوگوں کے مسائل سنے اوربعض مسائل کے حل کیلئے متعلقہ حکام کو فون پر ہدایات جاری کیں۔ صوبائی وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال نے کہا ہے کہ عوام کے مسائل کا حل ہماری ذمہ داری، جائز کام کسی صورت رکنے نہیں دیں گے۔لوگ الیکشن جیت کر عوام کو بھلاکراپنے گھروں میں بیٹھ جاتے ہیں۔ ہم عوام میں آتے ہیں، ہماراجینا مرناعوام کے ساتھ ہے۔ عوام سے رابطے کے ذریعے ان کے مسائل اور مشکلات سے براہ راست آگاہی ملتی ہے۔انہوں نے کہا کہ میرے دروازے عوام کے لئے کھلے ہیں، ہمہ وقت انکی خدمت کے لئے حاضر ہوں۔عوام کی خدمت عبادت اور اللہ تعالیٰ کی خوشنودی کے حصول کا ذریعہ ہے۔انہوں نے کہا کہ احساس کفالت پروگرام، صحت کارڈ، پناہ گاہیں،ہاؤسنگ پراجیکٹ، ہنرمند نوجوان پروگرام اور دیگر فلاحی اقدامات عوامی خدمت کے شاہکار ہیں۔صوبائی وزیر نے کہا کہ نام نہادخادم اعلیٰ نے پنجاب کا بیڑہ غرق کیا، ہرشعبے کو مقروض اور بدحال کرکے چھوڑا۔ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے پنجاب کو معاشی و تجارتی اور سرمایہ کاری کا مرکز بنا دیا۔ انہوں نے کہا کہ ن لیگ اور پیپلز پارٹی نے سرکاری وسائل کی بیدردی سے لوٹ مار کی پنجاب میں ایسے ناکام منصوبے شروع کئے گئے جس سے صوبہ اربوں روپے کا مقروض ہوا۔عوام تعلیم، صحت اور بنیادی سہولتوں کو ترستے رہے، نام نہاد خادم اعلیٰ نمائشی منصوبے لگاکر مال بناتے رہے۔ عوام کے مسترد شدہ کرپٹ عناصر کی سیاسی ساکھ ختم ہو چکی ہے۔ یہ عناصر اپنی ڈوبتی کشتی کو سہارا دینے کے لئے ہاتھ پاؤں مار رہے ہیں۔ نئے پاکستان میں کرپشن کی گنجائش ہے نہ کرپٹ عناصر کی۔ غریب عوام کے حق پر ڈاکہ ڈالنے والے یہ خیال دل سے نکال دیں کہ انہیں دوبارہ لوٹ مار کاموقع ملے گا۔

میاں اسلم اقبال

مزید :

صفحہ آخر -