مفتی محمد نعیم کے صاحبزادے جنوبی افریقہ سے کراچی پہنچ گئے

  مفتی محمد نعیم کے صاحبزادے جنوبی افریقہ سے کراچی پہنچ گئے

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)جامعہ بنوریہ عالمیہ کے نائب مہتمم مولانا فرحان نعیم وطن پہنچ گئے، آب دیدہ آنکھوں والد کی قبر کی زیارت کی،جامعہ کے مہتمم مولانا نعمان نعیم کے ہمراہ جامعہ کی انتظامیہ، طلبہ اساتذہ نے کراچی ائیرپورٹ پراشکبار آنکھوں استقبال کیا،واضح رہے کہ جامعہ بنوریہ عالمیہ سائٹ کے مہتمم معروف ومشہور مذہبی اسکالر مفتی محمد نعیم کا20جون 2020 کوعارضہ قلب سے انتقال ہواتھا، نماز جنازہ میں لاک ڈان کے باوجودلاکھوں افراد نے شرکت کی اورجامعہ بنوریہ کے قبرستان میں تدفین کی تھی،مفتی محمد نعیمکے صاحبزادے مولانا فرحان نعیم بیرون ملک کے سفر پر تھے جہاں وہ کورونا کے لاک ڈان کی وجہ سے وطن واپس نہ آسکے تھے اور والد کے جنازے اور تدفین میں بھی کوششوں کے باوجود شرکت نہ کرسکے، تاہم گزشتہ شب کئی ممالک سے ہوتے ہوئے پاکستان پہنچ گئے سب سے پہلے والد(مفتی محمد نعیم) کی قبر کی اشکبار آنکھوں زیارت کی ان کے ہمراہ ان کے بڑے بھائی اور جامعہ بنوریہ کے مہتمم مولانا نعمان نعیم، چاچا سعید اور قاری عبدالمنان، جامعہ بنوریہ عالمیہ کے ناظم تعلیمات وشیخ الحدیث مولانا عبدالحمید خان غوری، مولانا اسماعیل دھلوی،جے یوآئی کے مولانا راشدمحمود سومرو، مولانا غلام رسول،مولانا سیف اللہ ربانی،مولانا عبداللہ حنفی سمیت دیگر جامعہ کی انتظامیہ، طلبہ اساتذہ بھی موجود تھے،جبکہ جامعہ فاروقیہ شاہ فیصل کالونی کے مہتمم مولانا ڈاکٹر عادل خان، مولانا طلحہ رحمانی سمیت دیگر علما نے مولانا فرحان نعیم سے ملاقات کی اور تعزیت کی۔

مزید :

صفحہ آخر -