کورونا وائرس، ملازمتیں ختم،آمدنی میں کمی، خوراک مہنگی، لاکھوں امریکی شہری بھوک کا شکار

کورونا وائرس، ملازمتیں ختم،آمدنی میں کمی، خوراک مہنگی، لاکھوں امریکی شہری ...

  

واشنگٹن(اظہر زمان،خصوصی رپورٹ) امریکہ کوروناوائرس کے باعث ملازمتیں ختم ہونے،آمدنی میں کمی اورخورات کی قیمتوں میں اضافے سے کئی ملین شہری بھوک کاشکارہوگئے ہیں ”این بی سی“ٹیلی ویژن چینل نے ایک نجی ادارے ”فوڈ ریسرچ اینڈ ایکشن سنٹر“کایہ تبصرہ اپنے تازہ نشریے میں شامل کیا ہے اس ادارے کے مطابق باخبر سماجی راہنماؤں کاخیال ہے کہ اگر کانگریس نے مداخلت کر کے صورت حال کو بگڑنے سے نہ بچایاتوتو ایسا بحران پیدا ہوگا جس کی جدید زمانے میں مثال نہیں ملے گی رپورٹ بتایا گیا ہے کہ وہ لوگ جنہوں نے کبھی خوراک کے بارے میں عدم تحفظ محسوس نہیں کیاتھا وہ اب خوارک میں مدد حاصل کر رہے ہیں۔ ”این بی سی“ ٹی وی نے نارتھ ویسٹرن یونیورسٹی کے انسٹیٹیوٹ آف پالیسی سیڈیز کی بھی ایک جائزہ رپورٹ نشر کی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ کورونا وائرس کے باعث خوراک کا عدم تحفظ تقریباً ود گنا ہو گیا ہے۔ ایک اور ادارے ”فیڈنگ امریکہ“ کے جائزے کے مطابق فوڈ بنکوں سے رجوع کرنے والے امریکیوں میں سے چالیس فیصد ایسے افراد ہیں جنہوں نے پہلی دفعہ خوراک میں مدد طلب کی ہے۔ طلب میں اتنا اضافہ ہوا ہے جس کی پہلے مثال نہیں ملتی اور بلا معاوضہ خوراک فراہم کرنے والے فوڈ بنکوں کو ایسی صورت حال کا کبھی سامنا کرنا نہیں پڑا۔ طلب کے مقابلے پر سپلائی کہیں کم ہے۔ ماہرین کے مطابق رنگ دار لوگوں کے خاندان اور خصوصاً سینئر افراد خوراک کی کمی کا زیادہ شکار ہوئے ہیں۔

امریکہ،غربت

مزید :

صفحہ اول -