سربند، رنگ روڈ میں مبینہ پولیس مقابلے میں قتل ہونے والے چوکیدار کے ورثاء کا مظاہرہ

سربند، رنگ روڈ میں مبینہ پولیس مقابلے میں قتل ہونے والے چوکیدار کے ورثاء کا ...

  

پشاور(سٹی رپورٹر)سربند رینگ روڈ میں مبینہ پولیس مقابلے میں قتل ہونیوالے چوکیدار نور خان کے ورثا نے لاش سمیت پشاور پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے چیف جسٹس آف پاکستان اور آئی جی خیبر پختونخوا سے مطالبہ کیا ہے کہ ایس ایچ او سربندد مثل خان کے خلاف ایف ائی ار ددرج کر کے مجرموں کو قرار واقع سزا دی جائے اس موقع پر قتل ہونیوالے چوکیدار کے ورثا نے سڑک کو ہر قسم کی ٹریفک کے لئے بند کر احتجاجی مظاہرہ کیا۔مظاہرے سے پشتخرہ کے رہائشی عبدالواحد نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ روز دو فریقین سنگین خان اور حاجی گل کے درمیان ایک پلاٹ کے تنازعہ پر فائرنگ ہوئی جسکے بعدد تھانہ سربند سے بھاری نفری ایس ایچ او مثل خان کے ہمراہ موقع پر پہنچ گئی چونکہ ہمارا گھر واقع کے جگہ کیساتھ نزدیک تھا اسی لئے پولیس ہمارے گھر گھس ائی اور ہمارے چوکیدار نور خان کو گولی مار کر ہلاک کر دیا جبکہ میرے بیٹے اور دو مزدوروں کو اپنے ساتھ لے گئی جبکہ پولیس کی بھاری نفری اب بھی ہمارے گھر پر موجو د ہے انہوں نے چیف جسٹس آف پاکستان اور آئی جی خیبر پختونخوا سے مطالبہ کیا ہے کہ ایس ایچ او تھانہ سربند کے خلاف مقددمہ درج کیا جائے اور مجرموں کو قرار سزا دی جائے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -