وزرات انسانی حقوق، یورپین یونین کے نوجوان ماہرین پروگرام کا آغاز

وزرات انسانی حقوق، یورپین یونین کے نوجوان ماہرین پروگرام کا آغاز

  

اسلام آباد(آئی این پی) وزارت انسانی حقوق نے پاکستان میں وفاقی اور صوبائی انسانی حقوق کے محکموں میں نوجوان ماہرین پروگرام کا آغاز کیا۔ اس پروگرام کا مقصد نوجوان پیشہ ور افراد کو پاکستان میں ریاستی اداروں کے ساتھ مل کر کام کرنے، انسانی حقوق سے متعلق مخصوص علم اور مہارت حاصل کرنے کا موقع فراہم کرنا ہے۔اس پروگرام کا آغاز پاکستان میں انسانی حقوق سے متعلق ریاستی اداروں میں صلاحیتوں کی نشوونما اور ادارہ جاتی اصلاح کے لئے یورپین یونین کے حقوق پاکستان پروجیکٹ کے تحت کیا گیا۔نوجوان ماہرین کے پروگرام میں بھرپور، باصلاحیت اور متحرک نوجوان گریجویٹس کومحدود مدت کے لیے مختلف انسانی حقوق کے جڑے اداروں میں ملازمت دی گئی۔ پہلے گروپ میں 40 نوجوان ماہرین ہوں گے، جن کو لمبے عرصے کی ملازمت کے ساتھ،ٹوٹل 12 ماہ کی مدت تک شامل رہے گے۔ان نوجوان ماہرین کو نہ صرف پاکستان کے قانونی نظام، کے بارے میں تربیت دی جائے گی بلکہ ان کو وفاقی اور صوبائی سطح پر قائم انسانی حقوق کے اداروں کا تعارف بھی کروایا جائے گا اور ان کے ساتھ ساتھ کام کرنے کا موقع بھی فراہم کیا جائے گا۔ یہ پروگرام کو تحقیق، اعدادو شمار کا تجزیہ، پالیسی اور قانون سازی سے متعلق اپنی صلاحیتوں کو آگے بڑھنے اور مستحکم کرنے کے قابل بنائے گا، جبکہ موجودہ اداروں کی صلاحیتوں کے فرق کو بھی پورا کرے گا۔اس پروگرام کا افتتاح نوجوان پیشہ ور افراد کی پہلی کھیپ کے لئے چار روزہ آن لائن اورینٹیشن سیشن کے ذریعے کیا جارہا ہے۔پیر کو افتتاحی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے، وفاقی سکریٹری ایم ایچ آر ربیعہ جویریہ آغا نے کہا، "نوجوان ماہرین پروگرام ایک جدید اور ترقی پسند اقدام ہے جو پاکستان میں اپنی نوعیت کا پہلا ہے۔ پاکستان میں انسانی حقوق کے منظر نامے کو بڑی حد تک تبدیل اور مستحکم کرنے کے لئے نوجوانوں میں جذبہ، عزم اور صلاحیت کا مالک ہے۔

نوجوان ماہرین پروگرام

مزید :

پشاورصفحہ آخر -