15 سالہ لڑکے کی طاعون سے موت، پوری دنیا میں ایک اور وباءکا خوف پھیل گیا

15 سالہ لڑکے کی طاعون سے موت، پوری دنیا میں ایک اور وباءکا خوف پھیل گیا
15 سالہ لڑکے کی طاعون سے موت، پوری دنیا میں ایک اور وباءکا خوف پھیل گیا

  

الان باتر(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کا عذاب ہی کم نہ تھا کہ اب طاعون کی وباءنئے خوف کی صورت انسانوں پر مسلط ہوتی نظر آ رہی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق یہ وباءمنگولیا میں پھیلی ہے جہاں اب اس موذی کی وجہ سے ایک 15سالہ لڑکے کی موت بھی واقع ہو گئی ہے۔ اس لڑکے کی موت کے باعث کورونا وائرس کے بعد اب طاعون کا خوف دنیا میں پھیل گیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق منگولیا میں اب تک طاعون کے دو درجن کے لگ بھگ کیس سامنے آ چکے ہیں جس کی وجہ سے ملک کے کئی علاقوں میں لاک ڈاﺅن کیا جا چکا ہے۔ مرنے والے اس لڑکے کے متعلق بتایا جا رہا ہے کہ یہ طاعون میں مبتلا ہونے والا پہلا مریض تھا۔ اس نے کتے کے ذریعے چوہے کی طرح کے جانور’مرموت‘ کا شکار کیا تھا اور اس کا گوشت کھایا تھا۔ ممکنہ طور پر اسی جانور کے گوشت سے اسے طاعون لاحق ہوا۔ منگولیا کے ہمسایہ ممالک چین اور روس نے خطرہ ظاہر کیا کہ یہ وباءان کے ہاں بھی پہنچ سکتی ہے اور دونوں ممالک وباءکو اپنے ہاں آنے سے روکنے کے لیے اقدامات کر رہے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -