عارفوالہ، زہر یلے ناشتہ سے ایک اور بچہ جاں بحق، قاتل کزن نکلے 

عارفوالہ، زہر یلے ناشتہ سے ایک اور بچہ جاں بحق، قاتل کزن نکلے 

  

عارف والا(نمائندہ پاکستان)زہریلے ناشتہ کے باعث ہسپتال میں زیر علاج ایک اور بچہ دم توڑ گیا،تین بہن بھائی اور والدہ چند روزقبل دم توڑ گئے تھے،، بچوں کے والد کا بھانجا اور بھتیجا واقعہ میں ملوث نکلے، 16سالہ حمزہ نے ممانی کی ڈانٹ ڈپٹ سے دلبرداشتہ ہو کر کزن علی عظیم کے ساتھ ملکرپہلے دودھ میں زہر ملایا لیکن ممانی نے دودھ کی رنگت بدل جانے پر اسے ضائع کر دیابعد میں ملزمان نے اچار اور گھی میں زہرڈالا،،بچوں کے ماموں عبدالصمد کے بیان پر دونوں ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا۔دونوں ملزمان کی عمریں 16 اور 12 سال ہیں اور کزن ہیں، دونوں کو شک کی بنیاد پر گرفتار کیا تو انہوں نے اپنے جرم کا اعتراف کر لیا،،واضح رہے8 روز قبل نواحی گاؤں 143 ای بی میں راو توفیق کی فیملی نے پراٹھوں اور اچار سے ناشتہ کیا جس سے انکی حالت غیر ہو گئی تمام فیملی ممبران کو تشویشناک حالت کے پیش نظر لاہور منتقل کیا جہاں باری باری تمام افراد دم توڑتے گئے،ڈی ایس پی حافظ خضر زمان اور ایس ایچ اوتھانہ صدر شاہد بھٹہ نے مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ واقعہ کی تمام پہلوؤں سے تفتیش جاری ہے، ملزمان نے کریانہ کی دوکان سے گندم میں رکھنے والی گولیاں خریدیں۔، مرنے والوں میں تین سالہ عبداللہ، 6 سالہ عیشاء، 8 سالہ بلال، 10 سالہ اریجہ اور والدہ 30 سالہ صابرہ بی بی شامل ہیں 

زہریلا ناشتہ

مزید :

صفحہ آخر -