ہڈیارہ ، بجلی کی ننگی تار سے جاں بحق محنت کش 4 بچوں کا باپ گھر کا واحد کفیل تھا

ہڈیارہ ، بجلی کی ننگی تار سے جاں بحق محنت کش 4 بچوں کا باپ گھر کا واحد کفیل تھا

لاہور( خبرنگار) ہڈیارہ کے علاقہ میں بجلی کی ننگی تار سے شارٹ لگنے کے باعث جان بحق ہونے والا محنت کش چار کم سن بچوں کا باپ اور گھر کا واحد کفیل تھا۔ تفصیلات کے مطابق ہڈیارہ کے نواحی گاؤں نور پور گگا کا رہائشی شبیر احمد مقامی زمیندار کا مزارع تھا اور گھر سے کھیتوں کی جانب جا رہا تھا کہ راستے میں ایک پلاٹ میں بجلی کی گیارہ ہزار کے وی کی گری ہوئی ننگی تار سے اس کا پاؤں چمٹ گیااور بجلی کی ننگی تار نے اس کی جان لے لی۔ وہاں سے زمیندار کھیتوں کی جانب گزر کر جانے لگے توانہوں نے دیکھا کہ شبیر احمد مردہ حالت میں پڑا تھا۔ واقعہ کے خلاف لواحقین نے لیسکو کی انتظامیہ کے خلاف احتجاج بھی کیا۔ محنت کش شبیر احمد کے بھائیوں اور عزیز و اقارب شبیر احمد، نیاز احمد اور احسان احمد نے بتایا کہ شبیر احمد مزارع کا کام کرتا تھا اور گھر کا واحد کفیل تھا۔ حکومت کو چاہئے کہ متوفی شبیر احمد کے کم سن بچوں کی مالی امداد کرے۔ اس حوالے سے لیسکو کمپنی کے ایکسیئن کینٹ امتیاز احمد نے بتایا کہ آندھی اور بارش کے باعث بجلی کی تار گئی تھی جس کے باعث حادثہ پیش آیا، ایس پی کینٹ رانا طاہر نے بتایا کہ محنت کش شبیر احمد کی حادثاتی موت ہے، وزیر اعلیٰ پنجاب کے حکم پر ڈی سی او لاہور کو اس حوالے سے رپورٹ تیار کر کے بھجوا دی گئی ہے اور انشاء اللہ محنت کش شبیر احمد کے خاندان کی مالی امداد کی جائے گی۔

مزید : علاقائی


loading...