پی ایس 114میں شکست مخالفین کا مقدر بن چکی ہے،عارف علوی

پی ایس 114میں شکست مخالفین کا مقدر بن چکی ہے،عارف علوی

کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف سندھ کے صدر و رکن قومی اسمبلی ڈاکٹر عارف علوی نے کہا ہے کہ پیپلز پارٹی اور ن لیگ ایک سکے کے دو رخ ہیں ۔ پی ایس 114میں شکست پیپلز پارٹی اور متحدہ قومی موومنٹ کا مقدر بن چکی ہے۔ سندھ حکومت سرکاری وسائل استعما ل کر کے حلقے کی عوام کو اپنی طرف مبزول کرانے کی ناکام کوشش کر رہی ہے جو کبھی بھی کامیاب نہیں ہو سکتی۔ پیپلز پارٹی کے امیدوار سینیٹر سعید غنی تحریک انصاف کی قیادت اور کاکنان پر پی ایس114کی انتخابی مہم میں جھوٹے اور من گھڑت الزامات لگا رہے ہیں ۔ یہ باتیں انہوں نے محمود آباد میں انتخابی مہم کے سلسلے میں ایک عوامی افطار ڈنر سے خطاب کرتے ہوئے کہیں ۔ اس افطار ڈنر سے تحریک انصاف کے مرکزی سینئر رہنما عمران اسماعیل، سبحان علی ساحل، سرور راجپوت، امجد جاہ، بلال غفار، اکبر موریجواوردیگر رہنماؤں نے بھی خطاب کیا ۔ ڈاکٹر عارف علوی نے مزید کہا کہ سندھ حکومت نے ضمنی انتخاب جیتنے کے لئے سرکاری وسائل کے منہ کھول دیئے ہیں ۔ الیکشن شیڈول جاری ہونے کے بعد حلقے کے اندر ترقیاتی کام کروانا پری پول دھاندلی ہے۔ الیکشن کمیشن کو آگا ہ کرنے کے باوجود ٹس سے مس نہیں ہو رہے ہیں ۔پیپلزپارٹی کے غنڈوں اور بد معاشوں نے ہمیشہ اپنے سیاسی مخالفین پر حملے کئے ۔ گزشتہ دنوں رات کے وقت ہمارے پر امن کارکنان پر چنیسر گوٹھ میں پولیس کی سرپرستی میں سینیٹر سعید غنی کے بھائی کی موجودگی میں حملہ کر کے پی ٹی آئی کارکنان کو زخمی کیا اور دوسرے دن الزام پی ٹی آئی پر لگایا ۔ ان کو شرم آنی چاہئے کہ اپنی شکست سے خوفزدہ ہو کر اوچھے ہتھکنڈے استعما ل کر رہے ہیں ۔ پیپلز پارٹی کاماضی اس حلقے میں گواہ ہے کہ ان کی یہاں کوئی سیاسی حیثیت نہیں ۔ ایک چنیسر گوٹھ کی یوسی سے الیکشن نہیں جیتا جا سکتا اور چنیسر گوٹھ کے پولنگ اسٹیشنوں میں بھی تحریک انصاف کے ووٹر اور سپورٹر ان کا بھرپور مقابلہ کریں گے اور انہیں ٹھپے لگانے نہیں دیں گے۔سینیٹر سعید غنی کے الیکشن جیتنے کا خواب کبھی بھی شرمندہ تعبیر نہیں ہوگا۔ یہاں کے عوام اب آصف زرداری کے چور ٹولے کو کبھی بھی ووٹ نہیں دیں گے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...