بھارتی عامل نے امراض سے نجات کیلئے خواتین کو گائے کا فضلہ کھلا دیا

بھارتی عامل نے امراض سے نجات کیلئے خواتین کو گائے کا فضلہ کھلا دیا
بھارتی عامل نے امراض سے نجات کیلئے خواتین کو گائے کا فضلہ کھلا دیا

  


ممبئی(ڈیلی پاکستان آن لائن )بھارتی عامل نے مرگی کے مرض میں مبتلا ایک خاتون اور پیٹ درر سے نجاب دلانے کیلئے گریجوایشن کی طالبہ کو زبردستی گائے کا فضلہ کھلا دیا جس سے دونوں خواتین کی حالت غیر ہو گئی۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق بھارتی ریاست مہاراشٹر میں نام نہاد عامل نے ساتھیوں کی مدد سے مرگی کی مریضہ جبکہ پیٹ درد میں مبتلا گریجوایشن کی طالبہ کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا اور پھر دونوں کو گائے کا فضلہ کھلا دیا ۔واقعے کے بعد خواتین کی حالت غیر ہوئی تو معاملہ پولیس کے نوٹس میں آگیا جس نے لڑکی کے والد اور عامل سمیت 6افراد کو گرفتار کر لیا۔

ہولناک واقعہ ضلع لاتر کے ایک گاﺅں میں پیش آیا جہاں بی اے کی ایک طالبہ کو پیٹ کے درد کی شکایت تھی لیکن عقل و شعور سے عاری اس کے گھر والوں نے ڈاکٹر سے علاج کے بجائے کالا جادو کرنے والے ہندو عامل کو بلا لیا جس نے لڑکی کے لیے شرمناک طریقہ علاج تجویز کیا اور زبردستی اسے گائے کا فضلہ کھلا دیا، اس گھناونی حرکت میں لڑکی کے گھر والوں نے عامل کا بھرپور ساتھ دیا۔

اس لڑکی کے ساتھ ہی گاو¿ں کی ایک اور خاتون جو مرگی کے مرض میں مبتلا تھی اس کے ساتھ بھی یہی انسانیت سوز سلوک کیا گیا۔ ان دونوں خواتین کو پہلے خوب مارا پیٹا گیا اور پھر ہاتھ پاو¿ں باندھ کر زبردستی ان کے ساتھ یہ حیوانی سلوک کیا گیا۔

متاثرہ طالبہ یا کسی اور شخص نے پولیس کے پاس واقعہ کی شکایت درج نہ کرائی تاہم ویڈیو وائرل ہونے کے بعد پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے مقدمہ درج کرلیا اور کارروائی کرتے ہوئے لڑکی کے والد اور عامل سمیت 6 افراد کو گرفتار کر لیا۔

مزید : بین الاقوامی


loading...