پی ٹی آئی ایم ایف بجٹ ملکی معیشت کو سونامی کی طرح تباہ کر دے گا:بلاول بھٹو

پی ٹی آئی ایم ایف بجٹ ملکی معیشت کو سونامی کی طرح تباہ کر دے گا:بلاول بھٹو

  

اسلام آباد(آئی این پی)پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی ایم ایف بجٹ ہماری معیشت کو سونامی کی طرح تباہ کردے گا،بجٹ سے شعبہ صحت اور شعبہ زراعت کو تباہ کن نقصانات ہوں گے،سلیکٹڈ وزیراعظم عوام سے اس بات کا انتقام لے رہے ہیں کہ انہیں ووٹرز نے حق رائے دہی کا استعمال کرکے منتخب کیوں نہیں کیا،پی پی پی بجٹ کو مسترد کرچکی ہے اور اب ہر فورم پر اس کی مخالفت کی جائیگی۔وہ گزشتہ روز پاکستان پیپلزپارٹی کے ارکان پارلیمنٹ کے ویڈیو لنک اجلاس سے خطاب کر رہے تھے۔اجلاس میں ماہرین نے پی پی پی اراکین پارلیمان کو بجٹ کے حوالے سے بریفنگ دی۔ بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ اگر بجٹ کے خلاف عوام نے مزاحمت نہ کی تو غربت اور قحط جیسی صورت حال کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے،سلیکٹڈ وزیراعظم عوام سے اس بات کا انتقام لے رہے ہیں کہ انہیں ووٹرز نے حق رائے دہی کا استعمال کرکے منتخب کیوں نہیں کیا،وفاقی بجٹ کے اعدادوشمار اس بات کا اظہار ہیں کہ ملک کو تباہی کی سمت ڈال دیا گیا ہے،بجٹ میں کورونا وائرس کی وبا اور ٹِڈی دل کے حملوں کو نظرانداز کرنا افسوس ناک ہے،وفاقی بجٹ میں طبی عملے، تنخواہ دار طبقے، پنشنرز اور پسماندہ افراد کو نظرانداز کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ بجٹ میں بزرگوں کی پنشن نہ بڑھا کر انہیں مجبور کیا گیا کہ وہ وبا کے دنوں میں گھر سے باہر نکلیں،دنیا اپنے بزرگوں کے گھر پر رہنے کی تدابیر کررہی ہے اور ہم انہیں گھر سے نکالنے کی صورت پیدا کررہے ہیں،پی ٹی آئی ایم ایف بجٹ دراصل اشرافیہ کے لئے تیار کیا گیا ہے،وفاقی بجٹ میں عام آدمی اور غریبوں کے لئے کوئی ریلیف نہیں ہے،پی پی پی بجٹ کو مسترد کرچکی ہے اور اب ہر فورم پر اس کی مخالفت کی جائیگی۔

بلاول بھٹو

مزید :

صفحہ آخر -