سندھ میں کورونا کے مزید 2262کیسز،23مریض جاں بحق ہو گئے

  سندھ میں کورونا کے مزید 2262کیسز،23مریض جاں بحق ہو گئے

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ 10081 ٹیسٹ کئے گئے جس کے نتیجے میں 2262 نئے کیسز سامنے آئے جس کے بعد تعداد بڑھ کر 51518 ہوگئی ہے جبکہ 23 مزید مریض جان بحق ہوگئے ہیں جس کے بعد تعداد 816 ہوگئی ہے۔ یہ بات انہوں نے ہفتہ کے روز وزیراعلی ہاس سے جاری ایک بیان میں کہی۔ مرا علی شاہ نے کہا کہ 10081 ٹیسٹ کروائے گئے جن سے 2262 کیسز سامنے آئے جن کا نتیجہ 22.5 فیصد رہا۔ اب تک 287135 ٹیسٹ کئے جاچکے ہیں جس کے نتیجے میں 51518 کیسز سامنے آئے ہیں۔ انہوں نے کہا اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ اب ہم صوبے میں 50000 کیسز کو عبور کرچکے ہیں جنھیں اپنی اجتماعی کوششوں سے روکنے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ کوروناوائرس کے مزید 23 مریض انتقال کرگئے جس کے بعد ا موات کی تعداد بڑھ کر 816 ہوگئی جوکہ شرح اموات 1.6 فیصد ہے۔ مراد علی شاہ کے مطابق 26315 مریض زیر علاج ہیں ان میں سے 24525 کی بڑی تعداد گھروں میں آئسولیٹ ہیں جہاں حکومت کے ٹیلی میڈیسن سسٹم کے ذریعہ ان کی دیکھ بھال کی جا رہی ہے جبکہ 92 مریض قرنطینہ سینٹرز میں ہیں اور 1698 مختلف اسپتالوں میں زیر علاج ہیں۔ انہوں نے کہا کہ 539 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے جن میں 69 کو وینٹی لیٹر لگایا گیا ہے۔ وزیراعلی سندھ نے کہا کہ 1274 مریض صحتیاب ہوکر اپنی معمول کی زندگی بسر کر رہے ہیں۔ اب تک 24387 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں جسکے بعد بحالی کی شرح 47.4 فیصد ہوگئی ہے۔ بیان میں کہا گیا ہیکہ کورونا وائرس کے 2262 نئے کیسوں میں سے 1517 کا تعلق کراچی سے ہے ان میں ضلع شرقی530، ضلع جنوبی 412، ضلع وسطی 180، ضلع غربی 170، ضلع ملیر 116 اور ضلع کورنگی 109 شامل ہیں۔ مراد علی شاہ نے دیگر اضلاع سے متعلق بتایا کہ لاڑکانہ میں 106، حیدرآباد 86، سکھر 55، گھوٹکی 52، خیر پور 30، میرپورخاص 28، شکار پور 23، جامشورو 12، بدین، نوشہروفیروز اور سانگھڑ میں 8-8، ٹنڈو محمد خان 7، دادو 5، شہید بینظیر آباد اور سجاول میں 3-3، جیکب آباد اور قمبر میں 2-2، کشمور، ٹنڈو الہ یار اور ٹھٹھہ میں 1-1کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ مراد علی شاہ نے کہا کہ سندھ بھر میں کیسز بڑھ رہے ہیں ہر ایک کو ایس او پیز پر عمل کرنا ہوگا۔

مزید :

صفحہ اول -