عوام دشمن بجٹ انتخابی دعووں کی نفی ہے،کاشف سعید شیخ 

عوام دشمن بجٹ انتخابی دعووں کی نفی ہے،کاشف سعید شیخ 

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)جماعت اسلامی سندھ کے جنرل سیکریٹری کاشف سعید شیخ نے تبدیلی سرکار حکومت کی جانب سے پیش کردہ بجٹ کو عوام دشمن اور آئی ایم ایف کے ایجنڈے کی تکمیل قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ یہ بجٹ دراصل حکومت پاکستان کا نہیں بلکہ آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک کی جانب سے ان کی معاشی ٹیم کی طرف سے عوام دشمن ملک دشمن اور ملک کی معیشت کو مزید ابتری کی طرف دھکیلنے کی کوششوں کا حصہ ہے جس میں آئی ایم ایف کے تمام شرائط کو بلا چوں چراں منظور کیا گیا ہے۔ انہوں نے آج ایک بیان میں مزید کہا کہ روینو ٹارگٹ پورا نہ ہونے کی صورت میں حکومت کو مزید بیرونی قرضے لینے پڑیں گے، پاکستان پہلے ہی آئی ایم ایف سمیت دیگر بیرونی مالیاتی اداروں کی جانب سے 105ارب ڈالر کا مقروض ہے جو پاکستان کے تین سالوں کے بجٹ کے برابر رقم ہے، پاکستان کو 73سال مکمل ہونے کے باوجود ہم اپنا روینیو پیدا نہیں کرسکے، زراعت اور انڈسٹری کو ترقی دینے کی بجائے ملک کے معاشی نظام میں ریڑھ کی ہڈی جیسی حیثیت رکھنے والے دونوں اداروں کو مکمل طور پر تباہ کردیا گیا ہے اسٹیل ملز اس کی بہترین مثال ہے، حکومت ایک کروڑ نوکریاں اور پچاس لاکھ گھر دینے کی بجائے لاکھوں افراد کو بے روزگار اور بے گھر کرچکی ہے جبکہ اسٹیل ملز، ریلوے اور پی آئی اے سمیت دیگر سرکاری اداروں سے ہزاروں افراد کو نکالنے کی منصوبہ بندی پر کام جاری ہے، تبدیلی کا نعرہ لگانے والی حکومت اپنے دور حکومت میں روینیو سمیت ایک بھی ٹارگٹ پورا نہیں کرسکی جبکہ کورونا اور معاشی بدترین صورتحال کی موجودہ شکل مزید برقرار رہنے کی صورت میں پونے تین کروڑ لوگوں کے بیروزگار ہونے کا خطرہ ہے، غربت، بیروزگاری، مہنگائی سمیت زراعت اور صنعتی ترقی کے تمام نعرے اور دعوے کھوکھلے ثابت ہوئے،،تعلیم کے بجٹ میں معمولی اضافہ،روزگار کے نئے مواقع پیدا کرنے کی بجائے مزید سرکاری اداروں کی نجکاری کی منصوبہ بندی سے صاف ظاہر ہے کہ عمران خان نے تبدیلی او رنئے پاکستان کا دلفریب نعرہ لگاکر عوام کے ساتھ تاریخ کا سب سے بڑا دھوکہ کیا ہے، این ایف سی ایوراڈ کی رقم میں اضافہ نہ کرنا،سرکاری ملازمین اور پینشرز کی تنخواہوں کو منجمد اور صوبوں کے ترقیاتی منصوبوں میں کٹوتی،کورونا وبا کے باوجود صحت کے شعبہ کیلئے خاظر خواہ بجٹ نہ رکھنا موجودہ بجٹ کو عوام دشمن ثابت کرنے کیلئے کافی ہے۔جماعت اسلامی یہ سمجھتی ہے کہ موجوہ بجٹ عوام دشمن، آئی ایم ایف کے ایجنڈے کا حصہ ہے جس کیخلاف سینیٹر سراج الحق نے اپوزیشن کو اے پی سی بلانے کا مشورہ بھی دیا ہے، موجودہ نیازی حکومت کے اس بجٹ کو نہیں مانتے اور عوام کو ریلیف دلانے کیلئے ہر فورم پر بھرپور جدوجہد کریں گے

مزید :

صفحہ آخر -