چین میں دو ماہ بعد کورونا کے نئے متاثرین میں اچانک اضافہ،شہرمیں جنگی صورتحال

چین میں دو ماہ بعد کورونا کے نئے متاثرین میں اچانک اضافہ،شہرمیں جنگی صورتحال
چین میں دو ماہ بعد کورونا کے نئے متاثرین میں اچانک اضافہ،شہرمیں جنگی صورتحال

  

بیجنگ(ڈیلی پاکستان آن لائن)دنیا میں سب سے پہلے کورونا وائرس کا شکار ہونے والے چین میں ایک بار پھر کووڈ انیس کے کیسز میں اضافہ ہونے لگا لیکن اس بار یہ مریض ووہان میں نہیں بلکہ دارالحکومت بیجنگ میں سامنے آرہے ہیں۔

بی بی سی کے مطابق چین میں محکمہ صحت کے حکام کا کہنا ہے کہ گذشتہ روز کووڈ 19 کے 57 نئے متاثرین کی تصدیق ہوئی ہے جو کہ 13 اپریل کے بعد ملک میں ایک دن کے دوران کورونا کے نئے متاثرین کی سب سے بڑی تعداد ہے۔

خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق ان میں سے 38 افراد میں وائرس مقامی طور پر منتقل ہوا جن میں سے 36 کا تعلق بیجنگ سے ہے۔چین کے دارالحکومت بیجنگ میں کورونا کی دوسری لہر کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔ یہاں ایک مارکیٹ اور دیگر علاقوں کو عارضی طور پر سیل کر دیا گیا ہے جہاں سے وائرس پھیلنے کا خطرہ ہے۔

شہر میں دو روز قبل صرف چھ متاثرین کی نشاندہی ہوئی تھی۔ کھانے پینے کی اشیا کی مارکیٹ میں بڑے پیمانے پر ٹیسٹنگ کے دوران کووڈ 19 کے کچھ متاثرین کی تشخیص ہوئی تھی۔

ضلعی انتظامیہ کے ایک اہلکار کے مطابق شہر میں ’جنگی حالات جیسی صورتحال‘ ہے اور ہفتےسے ہر طرح کی سیاحتی سرگرمیوں اور کھیلوں کی تقریبات پر پابندی ہے۔

گزشتہ روز سامنے آنے والےنئے متاثرین میں سے 19 غیر ملکی ہیں۔ مزید نو اے سمپٹومیٹک متاثرین(وہ متاثرین جن میں علامات ظاہر نہ ہوں) کی بھی نشاندہی ہوئی ہے۔ جبکہ مزید کوئی ہلاکت نہیں ہوئی۔

چین اے سمپٹومیٹک متاثرین کو مجموعی مصدقہ متاثرین میں شمار نہیں کرتا۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -