کورونا وائرس کی علامات مردوں میں زیادہ ظاہرہوتی ہیں یا عورتوں میں ؟ گیلپ نے نیا سروے جاری کر دیا

کورونا وائرس کی علامات مردوں میں زیادہ ظاہرہوتی ہیں یا عورتوں میں ؟ گیلپ نے ...
کورونا وائرس کی علامات مردوں میں زیادہ ظاہرہوتی ہیں یا عورتوں میں ؟ گیلپ نے نیا سروے جاری کر دیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )پاکستان میں کورونا نے اپنے وار تیز کر دیئے ہیں اور کیسز کی تعداد ایک لاکھ 39 ہزار سے تجاوز کر گئی ہے جبکہ اب تک 2600 سے زائد افراد جان کی بازی ہار چکے ہیں ۔

عوامی آراءجاننے کے حوالے سے معروف ادارے گیلپ نے پاکستان میں کورونا وائرس کی صورتحال پر تازہ ترین سروے کے نتائج جاری کر دیے ہیں۔گیلپ پاکستان کے تازہ ترین سروے کے مطابق مئی 2020 میں 12 فیصد پاکستانیوں کو بخار کی شکایت ہوئی جب کہ 4 فیصد پاکستانیوں کو خشک کھانسی اور ایک فیصد کو سانس لینے میں دشواری محسوس ہوئی۔پاکستان میں کورونا وائرس کی صورتحال پر گیلپ کے سروےکے مطابق مئی میں 78 فیصد پاکستانیوں کو کورونا وائرس کی کوئی بھی تکلیف محسوس نہیں ہوئی۔

گیلپ پاکستان کے سروے کے مطابق 19 فیصد خواتین اور 6 فیصد مردوں کو بخار اور کورونا وائرس کی دیگر علامات ظاہر ہوئیں۔گیلپ سروے کے تازہ ترین نتائج کے مطابق خواتین میں مردوں کی نسبت کورونا وائرس کی علامات زیادہ ظاہر ہوئیں ہیں۔دوسری جانب پاکستان میں دیہات میں 14 فیصد جب کہ شہروں میں 7 فیصد لوگوں کو بخار ہوا ہے۔

مزید :

کورونا وائرس -