اطالوی سفارتکار کا دورہ ملتان، ملاقاتیں، دمدمے سے شہر کا نظارہ

 اطالوی سفارتکار کا دورہ ملتان، ملاقاتیں، دمدمے سے شہر کا نظارہ

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
ملتان(نیوز رپورٹر، سپیشل رپورٹر)ملتان چیئرمین والڈ سٹی پراجیکٹ پارلیمانی سیکرٹری برائے اطلاعات وثقافت محمد ندیم قریشی سے ان کی رہائش گاہ پر اطالوی کارپوریشن اسلام آباد سے مس کرستینہ کچر ہیرٹیج اینڈ ٹورذزیم اسپیشلسٹ  نے ملاقات کی۔ اور ملتان کی صدیوں (بقیہ نمبر44صفحہ6پر)
 پرانی شناخت کی بحالی اور قدیمی ہینڈی کرافٹ کے متعلق تبدلہ خیال کیا۔  اس موقع پر چیرمین والڈ سٹی نے اطالوی نماندے کو یقین دہانی کروای کے ثقافت و ٹورزم کی بحالی وزیراعظم پاکستان اور وزیر اعلی عثمان بزدار کے ویزن کے مطابق ہے۔ اور میں بطور پارلیمانی سیکرٹری بھرپور تعاون کی یقین دہانی کرواتا ہوں   اس موقع پر والڈ سٹی پراجیکٹ کے افسران نے موجود تھے ڈپٹی کمشنر علی شہزاد سے ان کے کیمپ آفس میں اطالوی کارپوریشن اسلام آباد کی سربراہ مس کرسٹینا نے ملاقات کی اور ملتان کی صدیوں پرانی شناخت کی بحالی اور ہینڈی کرافٹس پر خیالات کا تبادلہ کیا گیا۔ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ملتان کے تاریخی ورثے کو اس کی اصل حالت میں بحالی میں دلچسپی پر اطالوی حکومت کے شکر گزار ہیں۔والڈ سٹی پراجیکٹ ایک بہترین منصوبہ ہے،علی شہزاد نے کہا کہ والڈ سٹی پراجیکٹ کے تحت قالین بافی سمیت دیگر مٹنے والے فن کو زندہ رکھنے کی ضرورت ہے،پنجاب حکومت ڈائنگ آرٹ کو محفوظ کرنے کی خواہاں ہے،ملتان کے دستکاروں کی حوصلہ افزائی اور ان کے فن پاروں کو اجاگر کرنے کے لئے پراجیکٹ تیار کرنے کی ضرورت ہے۔اطالوی کارپوریشن کی مس کرسٹینا نے ڈپٹی کمشنر کی تجویز سے اتفاق کیا اور کہا کہ ملتان کے ہنرمندوں، فن اور تقافت کی ترویج کو والڈ سٹی پراجیکٹ کے تیسرے فیز میں شامل کیا جائے گا،تاریخی ورثے کے حوالے ملتان ایک منفرد مقام رکھتا ہے،یہاں کے مزارات  اور تاریخی عمارتیں منفرد طرز تعمیر کی وجہ سے اپنے اندر حیرت انگیز کشش رکھتے ہیں،مس کرسٹینا نے کہا کہ تاریخی ورثے اور ثقافت کو فروغ دیکر ملتان کو سیاحت کے میدان میں مقام دلایا جا سکتا ہے۔ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے مس کرسٹینا کو ملتان کی ثقافت پر مبنی تحائف بھی دئے۔بعد ازاں مس کرسٹینا نے دربار حضرت غوث بہالدین زکریا،حضرت شاہ رکن عالم،دربار حضرت شاہ گردیز اور دمدمہ کا دورہ بھی کیا۔
دورہ ملتان