آندھی، گرد آلود ہوائیں، مظفر گڑھ میں بجلی تار ٹوٹنے سے نوجوان جاں بحق

آندھی، گرد آلود ہوائیں، مظفر گڑھ میں بجلی تار ٹوٹنے سے نوجوان جاں بحق

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


 ملتان، چوک سرور شہید، وہاڑی، بوریوالا، مظفر گڑھ، بستی ملوک، محسن وال(سپیشل رپورٹر، نامہ نگار، بیورو رپورٹ، نامہ نگار، تحصیل رپورٹر، نمائندہ پاکستان) ملتان سمیت میدانی علاقوں میں دن بھر گرد آلود ہواؤں کے جھکڑ چلنے سے فضاء آلودہ،معمولات زندگی درہم برہم ہوکر رہ گئے،40کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چلنے والے گرد آلود جھکڑ وں نے میپکو کے ترسیلی نظام کا پول کھول دیا بیشتر علاقوں میں بجلی کی بندش جبکہ بار بار ٹرپنگ سے میپکو صارفین بدحال ہوگئے کئی علاقوں کی بجلی رات گئے تک بحال نہ ہوسکی،آم کے باغات کو بھی شدید نقصان پہنچا،بادلوں کی آنکھ مچولی کا سلسلہ جاری رہا۔تفصیل کے مطابق ملتان سمیت جنوبی پنجاب کے میدانی علاقوں میں گزشتہ روز گرد آلود آندھی چلنے کا سلسلہ دن بھر جاری رہا جس سے معمولات زندگی شدید متاثر ہوئے ہیں گرد آلود ہواؤں کے جھکڑ جن کی رفتار 40کلومیٹر فی گھنٹہ ریکارڈ کی گئی نے میپکو کے ترسیلی نظام کا پول کھول کے رکھ دیا گرد آلود آندھی سے میپکو کے 80سے زائد فیڈر ٹرپ کرگئے جبکہ دیگر فیڈز پر بجلی کی بار بار ٹرپنگ نے میپکو صارفین کو بدحال کرکے رکھ دیاہے۔کئی دیہی و مضافاتی علاقوں میں بجلی رات گئے تک بھی بحال نہ ہوسکی تھی،مذکورہ آندھی سے آم کے باغات میں کچا پھل گرنے سے باغبانوں کو نقصان پہنچا ہے جبکہ بادلوں کی آنکھ مچولی کا سلسلہ بھی جاری ہے جس سے بعض علاقوں میں ہلکی بوند باندی ہونے سے درجہ حرارت میں کمی واقع ہوئی ہے اس ضمن میں محکمہ موسمیات نے آج بارش کی پیشگوئی کی ہے۔چوک سرور شہید اور گردونواح میں صبح چلنے والی تیز آندھی اور گردو غبار نے دن کو رات میں بدل دیا تیز آندھی کی وجہ سے مختلف مقامات پر درخت جڑوں سے اکھڑ گئے اور بجلی کا ترسیلی نظام بھی متاثر ہوا، گذشتہ روز چوک سرور شہید اور گردونواح میں صبح آٹھ بجے بادل چھا گئے تاہم تھوڑی دیر بعدگرد آلود تیز آندھی کی وجہ سے دن میں رات کا سماں ہو گیا آندھی کے اڑنے والی ریت نے شہریوں کو شدید مشکلات میں ڈال دیا حد نظر دس فٹ تک رہ گئی،گرد آلود آندھی کا سلسلہ وقفے وقفے سے دن دو بجے تک جاری رہا،آندھی کی وجہ سے مختلف مقامات پر درخت جڑوں سے اکھڑ گئے جبکہ عارضی طور پر بنائے گئے چھپر اور سائن بورڈ بھی ہوا نے اڑا کر رکھ دئیے،بجلی کا ترسیلی نظام بھی بری طرح متاثر ہوا۔شہر اور گردونواح میں دن بھر گرد و غبار کے ساتھ تیز ہوائیں چلتی رہیں تیز ہوائیں چلنے سے گرمی کی شدت میں کمی آگئی شہری موسم خوشگوار ہونے پر خوش دکھائی دیئے جبکہ تیز آندھی کے سبب لاری اڈا اور مین ملتان روڈ پر بجلی کی مین تاریں سڑک پر گر گئیں جس سے ٹریفک کی روانی متاثر ہونے کے ساتھ شہر بھر کو بجلی کی فراہمی معطل ہوگئی جس سے شہری شدید پریشان دکھائی دیئے ٹوٹی تاروں کو جوڑنے کیلئے میپکو عملہ کئی گھنٹے تاخیر سے موقع پر پہنچا جس پر شہریوں نے تشویش کا اظہار کیا تاہم شام تک تاریں مرمت کرکے بجلی بحال کردی گئی محکمہ موسمیات نے آئندہ دنوں میں بارش کی پیش گوئی کی ہے تیز آندھی سے بستی جلال آباد میں ٹوٹی تار نوجوان پر آ گری، 24 سالہ محمد رمضان جاں بحق، ریسکیو 1122 کنٹرول روم کو کال موصول ہوئی کہ  بستی جلال آباد،نزد دائے والی ماری علی پور روڈ مظفرگڑھ میں بجلی کی تاریں آپس میں ٹکرانے سے سپارکنگ ہوئی ہے اور وہ ٹوٹ گئی ہیں۔ جس سے دو آدمیوں کو کرنٹ لگا۔ ریسکیو 1122 کنٹرول روم نے فوری طور پرکالر کی بتائی ہوئی لوکیشن پر  ایمبولینس بھیج دی، ریسکیو کی ٹیم کرنٹ سے زخمی 24 سالہ محمد رمضان کو ضلعی صدر ہسپتال مظفرگڑھ منتقل کر رہی تھی کہ وہ جانبر نہ ہو سکا، اور دم توڑ گیاگرد آلود ہواؤں نے واپڈا بستی ملوک کی کارکردگی کا پول کھول دیا دنیاپور روڈ بستی اوکاں والا,مین روڈ پر بجلی کا کھمبا معمولی ہوا چلنے سے ہی زمین بوس ہو گیا جس سے بجلی کی ترسیل بھی متاثر  جبکہ بجلی کی ننگی تاریں سڑک اور قریبی فصل میں پڑی ہوئی ہیں جو کسی بھی نا خوشگوار حادثہ کا باعث بن سکتی ہیں  اہل علاقہ کا واپڈا حکام سے فوری طور پر بحالی کا کام شروع کرنے کی درخواست SDOبستی ملوک کا کہنا ہے کہ کام جاری ہے جلد پول لگا کر بجلی بحال کر دی جائے گی دوسری طرف وپڈا شجاع آباد کے زیر کنٹرول علاقہ بستی شیرواں کا ٹرانسفارمر گرمی بڑھتے ہی جل گیا مقامی آبادی کا کہنا ہے کہ بستی کی آبادی بہت زیادہ ہے اور ٹرانسفارمر چھوٹا پہلے بھی کئی بار خراب ہوا لیکن واپڈا حکام یہاں بڑا ٹرانسفارمر نصب کرنے کی بجائے اسے ہی مرمت کرکے چلے جاتے ہیں جو چند دن بعد ہی لوڈ زیادہ ہونے کی وجہ سے جل جاتا ہے واپڈا کے اعلی حکام نوٹس لیں اور یہاں بڑا ٹرانسفارمر نصب کیا جائے محسن وال نواحی علاقہ 50 پندرہ ایل میں مزدور سرفراز کھوکھر کے گھر اچانک آگ بھڑک اٹھی,سرفراز کھوکھر کے مطابق تیز ہوا کے باعث چولہے میں سلگتی ہوئی لکڑیوں سے چنگاریاں اڑیں جس سے قریب پڑے ہو ئے خشک ایندھن آگ لگ گئئ اور پورا گھر  اگ کی لپیٹ میں آ گیا، گھر میں کھڑی لاکھوں روپے مالیت کی بیس بکریاں اور گھریلو سامان جل کر راکھ ہو گیا،ہوا کے تیز جھکڑوں کے باعٹ گھر کے سامان اور قیمتی بکریوں کو  ریسکیو کرنے میں دقت کا سامنا کرنا پڑا  اگ پر ریسکیو 1122 اور عوام نے دو گھنٹے کی کوشش سے قابو پایا۔
آندھی
 ملتان، سرائے سدھو، عبدالحکیم(نیوزرپورٹر، نمائندہ خصوصی، سٹی رپورٹر)  ملتان الیکٹرک پاور کمپنی لمیٹڈ (میپکو) انتظامیہ کی جانب سے لوڈ شیڈنگ فری بجلی کی  فراہمی کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے بجلی کے گھنٹوں تعطل کا سلسلہ بدستور زور و شور سے جاری ہے جبکہ گرمی کا آغاز ہونے کے ساتھ ہی بجلی کی لوڈ شیڈنگ اور بار بار کی ٹرپنگ نے گھریلو صارفین سمیت تمام شعبہ زندگی کو شدید متاثر کرکے رکھ دیا ہے  گذشتہ روز بھی زرا سی آندھی کیا چلی کہ ملتان شہر سمیت میپکو ریجن کے متعدد علاقے اندھیرے میں ڈوب گئے اس گھمبیر صورتحال نے تاجروں کی کاروباری سرگرمیوں پر بھی منفی اثرات مرتب ہورہے ہیں پاکستان سے گفتگو کرتے ہوئے مرکزی انجمن تنظیم تاجران کے مرکزی چیئرمین خواجہ سلیمان صدیقی، صدر سمال ٹریڈرز ظفر اقبال صدیقی، کیمسٹ اینڈ ڈرگسٹ ایسوسی ایشن کے ڈویژنل صدر محمد اختر بٹ، پاور لومز ایسوسی ایشن کے سینئر نائب صدر خلیل احمد انصاری، ٹریولز ایسوسی ایشن کے صدر شکیل احمد خان کریانہ ایسوسی ایشن کے صدر میاں آفاق انصاری اور مدنی مارکیٹ کے صدر جعفر علی شاہ نے کہا ہے کہ تاجر برادری دنیا کی مہنگی ترین بجلی کے بلوں کی ادائیگی کے باوجود بجلی سے محروم ہے روزانہ کی بنیاد پر مختلف حیلے بہانوں سے پانچ سے سات گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ کی جارہی ہے جبکہ دیہی علاقوں میں لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ اس سے کئی گنا زائد ہے انہوں نے کہا کہ ہر چھ ماہ بعد میپکو انتظامیہ کی جانب سے اس خطے کے عوام کو یہ نوید سنائی جاتی ہے کہ سسٹم اپڈیٹ کیا جارہا ہے بوسیدہ و کمزور تنصیبات کو تبدیل کیا جارہا ہے جسے خلاوں میں تو محسوس کیا جاسکتا ہے لیکن زمینی حقائق ان دعووں کے برعکس ہیں ترسیلی نظام کی پچاس سالہ پرانی تاریں جو کل بازاروں میں جھولتی نظر آتی تھیں وہ آج بھی میپکو انتظامیہ کی کارکردگی کا منہ چڑا رہی ہیں انہوں نے کہا کہ بجلی کے تعطل سے پراڈکٹ پر منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں جس سے مہنگائی میں اضافہ ہوتا ہے ملک میں مہنگائی کا ایک سبب بجلی بھی ہے کریانہ فروش و دیگر شاپس پر آٹھ بجے کی بندش عائد کی گئی ہے اور مقررہ ورکنگ پیریڈ کے دوران بجلی نہ ہونے سے کاروبار ٹھپ ہوکر رہ جاتا ہے اس پر ستم ظریفی یہ ہے کہ متعلقہ میپکو سب ڈویژنز صارفین سے رابطہ بھی منقطع رکھتے ہیں انہوں نے مزید کہا کہ بجلی کی بندش سے پاور لومز اور ٹریولنگ کے بزنس کو بھی شدید نقصان پہنچ رہا ہے گذشتہ روز بھی آندھی کے آغاز میں ہی ملتان شہر سمیت ریجن کے متعدد علاقے اندھیرے میں ڈوب گئے بعض علاقوں میں تین سے پانچ گھنٹوں میں بحال کردی گئی جبکہ بعض علاقوں میں تاحال بجلی کا لاک ڈاون جاری ہے جن گارڈن ٹاون اور اس سے ملحقہ آبادیاں سرفہرست ہیں لوڈ شیڈنگ سے جہاں بزنس کمیونٹی مشکلات سے دوچار ہے وہیں گھریلو صارفین کو سخت اذیت سے دوچار ہونا پڑا ہے گھریلو صارفین اعجاز احمد، حاجی لیاقت، محمود شاہ، عطا احمد، ظہور احمد اور حاجی اشرف کے مطابق گرمی میں شدت آنے کے ساتھ ہی بجلی کی بندش بھی معمول بنتی جارہی ہے اس صورتحال نے میپکو ترسیلی نظام اور انتظامیہ کی کارکردگی کا پول کھول کر رکھ دیا ہے انہوں نے بتایا کہ گھنٹوں بجلی کے تعطل سے گھر کا پورا نظام درہم برہم ہوکر رہ جاتا ہے اور محفوظ کی گئی اشیا بھی قابل استعمال نہیں رہتی میپکو صارفین سے بجلی کے نرخوں سمیت درجن بھر ٹیکسز کے علاوہ متعدد غیرقانونی بھتہ وصولیوں کے باوجود صارفین کو بجلی کی تسلسل کے ساتھ فراہمی میں مکمل طور پر ناکام ہے انہوں نے مزید کہا کہ میپکو انتظامیہ ہلکی سی آندھی اور بارش کے باعث گھنٹوں بجلی کی سپلائی معطل کردیتے ہیں جو میپکو کی کمزور تنصیبات ہونے کی دلیل ہے جبکہ شہر کے مختلف علاقہ جات سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق ایم ڈی اے چوک، شاہ رکن عال کالونی، نیو ملتان، چوک کمہاراں، گارڈن ٹاون، شیر شاہ، مظفرآباد، حافظ جمال روڈ سمیت متعدد شہری علاقوں میں چھ بجے سے رات نو بجے تک بجلی کی سپلائی معطل رہی ہے جبکہ دیہی علاقہ جات میں روزانہ کی بنیاد پر دن میں تین بار دو گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ کی جارہی ہے لیکن میپکو انتظامیہ کا موقف وہی پرانا ہے کہ لوڈشیڈنگ نہیں کی جارہی۔   سرائے سدھو اور اسکے گردونواح کے علاقوں میں بجلی کی بدترین لوڈ شیڈنگ کے علاوہ ٹرپنگ کا سلسلہ بھی عروج پر پہنچ گیا ہے بار بار کی آنکھ مچولی سے لوگوں کی لاکھوں روپے مالیت کی الیکٹرانک اشیا جل کر راکھ ہو گئیں ہیں مگر میپکو انتظامیہ کو ہوش نہیں آیا ذراسی ہوا چلے ایس ڈی اور لائن سپریڈنٹ گرڈ اسٹیشن سے تمام فیڈر کی بجلی بند کروادیتے ہیں اور یوں سسٹم کی خرابی پر پردہ ڈال کر عوام الناس کو پریشان کرکے اپنی نااہلی کو چھپا لیتے ہیں مگر غریب عوام کا کیاجرم ہے جو بھاری بل ادا کرنے کے باوجود ذلیل وخوار ہورہے ہیں سرائے سدھو اور گردونواح کے عوامی وسماجی حلقوں نے وزیراعظم سمیت میپکو کے  اعلی حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ ہمیں اس عذاب سے نجات دلائیں ملک کے دیگر علاقو ں کی طرح عبدالحکیم میں بھی گرمیوں میں شدت کے ساتھ ہی بجلی کی بندش بھی شروع کر دی گئی ہے،گزشتہ روز صبح سات بجے سے دوپہر 12بجے تک بجلی بند کی گئی ہے،اسکے علاوہ دن بھر وقفہ وقفہ سے بجلی بند کی جاتی رہتی ہے،اسکے علاوہ ہر گھنٹہ بعد دو چار منٹ کی ٹرپنگ بھی ہوتی ہے جس کے سبب الیکٹرونکس کے آلات خصوصا کمپیوٹراور محکمہ صحت سے متعلقہ مشینیں شدید متاثر ہورہی ہیں۔اس ضمن میں میپکو ترجمان نے بتایا کہ لوڈ شیڈنگ میں سپلائی لائن میں ہو رہی ہے جبکہ مقامی سطح پر صرف ضروری مرمت کے دوران پرمٹ حاصل کرکے ہی بجلی بند کی جاتی ہے۔
بجلی

مزید :

صفحہ اول -