ادھیڑعمر خاتون کیساتھ شادی، چند ماہ بعد دولہا سب کچھ لوٹ کرفرار لیکن پھر ایسا انکشاف کہ یقین کرنا مشکل

ادھیڑعمر خاتون کیساتھ شادی، چند ماہ بعد دولہا سب کچھ لوٹ کرفرار لیکن پھر ...
ادھیڑعمر خاتون کیساتھ شادی، چند ماہ بعد دولہا سب کچھ لوٹ کرفرار لیکن پھر ایسا انکشاف کہ یقین کرنا مشکل

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) شادی کرکے لوٹنے اور فرار ہو جانے والی دلہنوں کے بارے میں تو آپ نے سن رکھا ہو گا۔ اب بھارت میں ایک ایسا دولہا بھی سامنے آ گیا ہے جس نے ایک خاتون سے شادی کی اور اس سے ساڑھے چار لاکھ بھارتی روپے (تقریباً 9لاکھ 61ہزار پاکستانی روپے)لوٹ کر غائب ہو گیا۔
 ٹائمز آف انڈیا کے مطابق اس 42سالہ خاتون کی طرف سے پولیس کو درج کرائی گئی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اس خاتون کے ساتھ اس آدمی کی دوسری شادی تھی۔ شادی کے بعد چند ماہ کے اندر اس نے خاتون سے مذکورہ رقم بطور قرض لی اور اب وہ غائب ہو چکا ہے اور کئی ہفتوں سے اس کا خاتون کے ساتھ کوئی رابطہ نہیں ہے۔
خاتون نے بتایا کہ ”یہ میری بھی دوسری شادی تھی۔ میری پہلی شادی 1994ءمیں ہوئی جس سے میری ایک بیٹی تھی۔ 2008ءمیں میری بیٹی کا ایکسیڈنٹ ہو گیا اور وہ دنیا سے چلی گئی۔ اس کے بعد میرے شوہر کے ساتھ اختلافات بڑھنے لگے اور نوبت طلاق تک پہنچ گئی۔ طلاق کے بعد کئی سال تک میں اکیلی رہتی رہی اور پھر میری ملزم کے ساتھ دوستی ہو گئی اور چند ماہ قبل ہم نے شادی کر لی۔ اس نے مجھ سے ساڑھے چار لاکھ کی رقم ادھار مانگی۔ میرے پاس اڑھائی لاکھ روپے تھے، دو لاکھ روپے میں نے قرض لے کر یہ رقم اسے دے دی اور وہ پنجاب چلا گیا اور پھر واپس نہیں آیا۔ بعد میں مجھے معلوم ہوا کہ اس نے پنجاب میں ایک اور شادی بھی کر رکھی تھی۔ “
 پولیس نے ملزم کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر رکھی ہے جس میں یہ انکشاف بھی سامنے آ چکا ہے کہ وہ اسی طریقے سے 2018ءمیں بھارتی شہر گووا کی ایک خاتون کو بھی لوٹ چکا ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -