امریکا میں واکس ویگن کے چیف ایگزیکٹو کا مستعفی ہونے کا اعلان

امریکا میں واکس ویگن کے چیف ایگزیکٹو کا مستعفی ہونے کا اعلان

  

نیویارک (اے پی پی) جرمنی کی موٹر ساز کمپنی واکس ویگن نے امریکا میں کمپنی کے چیف ایگزیکٹو کے مستعفی ہونے کا اعلان کردیا۔واکس ویگن کے پیسنجر کاروں کے شعبے کے چیف ایگزیکٹو ہربرٹ ڈائز نے اپنے بیان میں کہا کہ امریکا کیلئے کمپنی کے چیف ایگزیکٹو مائیکل ہارن اپنے عہدے سے مستعفی ہوگئے ہیں جس کی وجہ گاڑیوں سے دھوئیں کے اخراج کا سکینڈل ہے جس کے باعث ادارے کو اربوں ڈالر جرمانے کا سامنا ہے۔انھوں نے کہا کہ وہ مائیکل ہارن کے وہ ذاتی طور پر بھی مشکور ہیں۔

انھوں نے کمپنی مصنوعات کی امریکا میں فروخت اور فروغ کیلئے بے انتہا کام کیا۔انھون نے قومی سطح کے ڈیلرز کے ساتھ مضبوط تعلق قائم کرکے مشکل ترین حالات میں ادارے کی مصنوعات کو فروغ دے کر ایک مثالی لیڈر کی حیثیت سے اپنا وجود منوایا۔یاد رہے کہ مائیکل ہارن نے 1990 ء میں کمپنی میں شمولیت اختیار کی تھی اور جنوری 2014 ء میں انھیں ملک کیلئے کمپنی کا چیٖٖف ایگزیکٹو بنا دیا گیا تھا۔

مزید :

کامرس -