جماعت اسلامی کی کرپشن فری پاکستان مہم،احتجاجی کیمپ،مظاہرے،ریلیاں

جماعت اسلامی کی کرپشن فری پاکستان مہم،احتجاجی کیمپ،مظاہرے،ریلیاں

  

ڈیرہ غازیخان،اوچشریف،صادق آباد (نمائندگان) جماعت اسلامی کی کرپشن فری مہم کے سلسلے میں جنوبی پنجاب کے مختلف علاقوں میں احتجاجی کیمپ لگاکر مظاہرے کئے گئے اور ریلیاں نکالی گئیں ڈیرہ غازیخان سے نمائندہ خصوصی کے مطابق جماعت اسلامی پنجاب کے نائب امیر چوہدری عزیر لطیف اور شیخ (بقیہ نمبر38صفحہ7پر )

عثمان فاروق نے کہا ہے کہ معاشی دہشت گردوں کے لیے نیب کا ادارہ سہولت کار کردار ادا کررہاہے چیف جسٹس آف پاکستان کھربو ں روپے کی کرپشن کرنے والے سیاست دانوں ،بیوروکریٹس اور حکمرانوں کے خلاف از خود نوٹس لیں۔یہ بات انہوں نے کرپشن فری پاکستان مہم کے سلسلہ میں ڈیرہ غازیخان میں ٹریفک چوک پر لگائے گئے احتجاجی کیمپ اور مظاہرے جبکہ جھوک یار شاہ ،دری ڈھولے والی ،کالا،شادن لُنڈمیں جلسوں سے خطاب کرتے ہوئے کہی انہوں نے کہا کہ موجود ہ اور سابقہ حکمرانوں کی کرپشن کے باعث پاکستان اربوں ڈالرکا مقروض ہے جبکہ کرپٹ مافیانے 375ارب ڈالربیرون ملک کے بنکوں میں رکھے ہوئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ کرپشن فری پاکستان مہم کے دوران ایک کروڑافرادکرپشن ختم کرنے کے مطالبہ پر دستخط کرائے جائیں گے جبکہ 8 اپریل کو ناصر باغ سے اسمبلی ہال تک لاہورمیں ایک لاکھ افراد کرپشن کے خلاف دھرنا دیں گے انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی ہرسطح پر کرپشن کے خاتمے کے لیے بھرپورمہم جاری رکھے گی۔اوچ شریف سے نمائندہ پاکستان کے مطابق جماعت اسلامی کی کرپشن فری پاکستان مہم کے سلسلہ میں امیر جماعت اسلامی میونسپل کمیٹی اوچشریف ملک طاہر منظور کی رہائش گاہ پر علماء دین کے اعزاز میں ناشتے کا اہتمام کیا گیا اس موقع پر ملک طاہر منظور نے کہا کہ کرپشن کا ناسور ملکی اور قومی سلامتی کیلئے خطرناک صورتحال اختیار کر چکا ہے جس کی وجہ سے ملک مسائل کا شکار ہے علماء اپنا دینی فریضا سمجھتے ہوئے کرپشن کے خلاف مہم میں ہمارا ساتھ دیں اور اپنے اندر کے اختلافات بھلا کر دین کی اساس پر یکجاہو جائیں جماعت اہلسنت کے علامہ دیوان سید گل حسن بخاری نے کہا کہ ہر مثبت اقدام میں ساتھ ہیں ہمیں چاہیے کہ مل کے لوگوں کے اندر دین کاصحیح شعور اجاگر کریں ۔صادق آباد سے تحصیل رپورٹرجماعت اسلامی صادق آباد حلقہ خواتین کے زیر اہتمام کرپشن فری پاکستان کے موضوع پر ریلی نکالی گئی ریلی کا آغاز پاکستان چوک سے ہوا اور یہ مختلف بازاروں سے ہوتی ہوئی پریس کلب پہنچ کر اختتام پذیر ہوئی جہاں پر خواتین نے ملک میں جاری کرپشن اور پنجاب میں منظور ہونیوالے حقوق نسواں بل کیخلاف احتجاج کیا اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے خواتین رہنماؤں کہا کہنا تھاکہ پاکستان کرپشن کا گڑھ بن چکا ہے حکومتی اور پرائیویٹ سطح پر ہر جگہ کرپشن کا بازار گرم ہے ایک عام کام سے لیکر ہر خاص کام تک ہر جگہ رشوت دینا اور لینا لازم و ملزوم بن گیا جس کی وجہ سے عوام کا استحصال ہورہا ہے کہ ملک کو فوری طور پر کرپشن سے پاک کرنے کیلئے اقدامات کیے جائیں ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -