پاکستان کی ہر اسمبلی سے ایم کیو ایم کیخلاف قراردادیں پاس ہوئیں،فاروق بھائی ہمیں جانتے ہیں یقینا ہمارا ساتھ دیں گے، پارٹی کے اندر ہی مائنس ون فارمولا چل رہا ہے: رضا ہارون

پاکستان کی ہر اسمبلی سے ایم کیو ایم کیخلاف قراردادیں پاس ہوئیں،فاروق بھائی ...
پاکستان کی ہر اسمبلی سے ایم کیو ایم کیخلاف قراردادیں پاس ہوئیں،فاروق بھائی ہمیں جانتے ہیں یقینا ہمارا ساتھ دیں گے، پارٹی کے اندر ہی مائنس ون فارمولا چل رہا ہے: رضا ہارون

  

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) سابق صوبائی وزیر رضاہارون نے مصطفیٰ کمال اور انیس قائم خانی کی پارٹی میں شمولیت کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ جو ہمیں جانتے ہیں وہ ہمارا ساتھ دیں گے ،فاروق بھائی ہمیں جانتے ہیں اور وہ یقینا ہمارا ساتھ دیں گے ایم کیوایم کسی ایک شخص کومطمئن کرنے کےلئے نہیں بنی تھی پارٹی جن وعدوں کے ساتھ بنی تھی وہ پورے نہیں ہوئے،ہم 1987 سے ایم کیو ایم سے وابستہ تھے لیکن وقت کے ساتھ آنکھیں کھلتی گئیں،باطل قوت کے سامنے کھڑے ہونے کےلئے جرات کی ضرورت تھی ہرگھرمیں سب یہ ہی بات سوچ رہے ہیںجو باتیں کی گئیں وہ درست ہیںجن لوگوں نے یہ قدم اٹھایایہ اپنی مثال آپ ہے یہ قدم پاکستان سے محبت کا اہم قدم تھا،3مارچ ایسادن تھاجب پاکستان کی تاریخ میں اہم قدم اٹھایاگیا۔

مصطفیٰ کمال کے گھر پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے رضا ہارون کا کہنا تھا کہ پاکستان کی کوئی ایسی اسمبلی نہیں ہے جس میں ان کیخلاف قرارداد پاس نہ ہوئی ہولیکن بلوچستان اسمبلی میں دوبار قرار داد پاس ہوئی ۔ اگر ان ساری قراردوادوں کو ملا کر پڑھا جائے تویہ بات سمجھ میں آتی ہے کہ تمام قراردادوں میں ایم کیو ایم کی مذمت کی گئی ہے اور غداری کے مقدمے کے اندراج کا مطالبہ کرتے ہوئے کارروائی کی تجویز دی گئی ہے۔انہی سب باتوں کی وجہ سے میں نے ان لوگوں کو جوائن کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور میری تمام تر خدمات مصطفیٰ کمال اور انیس قائم خانی کیلئے حاضر ہیں۔دنیا میں کوئی ایسی پارٹی نہیں ہے جو اپنا منشور، اپنی ممبر سازی اور باقاعدہ نظام بنانے سے پہلے الیکشن میں حصہ لے، ہم اگلے الیکشن میں حصہ نہیں لیں گے بلکہ باقاعدہ تنظیم سازی کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ آپ ’را‘ ، ’نیٹو‘ اور ’یو این او‘ کو پاکستان میں بلا رہے ہیں لیکن خود کب پاکستان آو¿گے نائن زیرو پر کبھی کبھی ہیپی آور شروع ہو جاتا تھا لیکن جب ہیپی آور ختم ہوتا تھا تو معافیاں شروع ہوجاتی تھیں بی بی سی نے ایک سال پہلے آپ کے اوپر ملک دشمنی اور ’را‘ سے فنڈنگ کا الزام لگادیا لیکن آپ آج تک عدالت ہی نہیں جاسکے کئی مرتبہ حکومت میں شامل ہوئے لیکن اس کے باوجود ہمیں ثابت کرنا پڑرہا ہے کہ ہم ’را‘ کے ایجنٹ نہیں ہیں۔

رضا ہارون کا کہنا تھا کہ طارق میر نے سکاٹ لینڈ یارڈ کو لکھ کر دیا کہ جو بھی معاملات ہوتے ہیں ان کا صرف چار لوگوں کو پتا ہے باقی پارٹی کے کسی فرد کو اس بارے میں نہیں پتا ہوتا تھا۔ جب لندن میں گرفتاریاں ہوئیں تو وہاں کوئی مظاہرہ نہیں ہوا کیونکہ وہاں اقبالی بیانات دیے ہوئے ہیں لندن میں گرفتاریوں پر مظاہرے پاکستان میں ہورہے ہیں لاہور ہائیکورٹ نے پابندی لگائی لیکن مظاہرے ڈیوڈ کیمرون کے گھر کے باہر ہورہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کسی کو آپ کے خلاف سازش کرنے کی ضرورت نہیں ہے آپ خود ہی کافی ہیں وہ شخص عقل سے پیدل ہوگا جو آپ کے خلاف سازش کرے گا کیونکہ مائنس ون اندر سے ہورہا ہے ، اگر ان کو پھر بھی لگتا ہے کہ ان کے خلاف سازش ہورہی ہے تو میں سٹیبلشمنٹ سے کہوں گا کہ ان کی تقریروں سے پابندی ختم کردیں پھر سب لوگوں کو خود ہی پتا چل جائے گا۔

مزید :

قومی -اہم خبریں -