پاکستانی لڑکے کی محبت میں شادی کے لئے بھارت چھوڑ کر آنے والی ’’عظمٰی کی زندگی پر فلم بنانے کا فیصلہ 

پاکستانی لڑکے کی محبت میں شادی کے لئے بھارت چھوڑ کر آنے والی ’’عظمٰی کی ...
پاکستانی لڑکے کی محبت میں شادی کے لئے بھارت چھوڑ کر آنے والی ’’عظمٰی کی زندگی پر فلم بنانے کا فیصلہ 

  


ممبئی(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستانی لڑکے طاہر کی محبت میں شادی کے لئے بھارت چھوڑ کر آنے والی ’’عظمٰی کی زندگی پر فلم بنانے کا فیصلہ کر لیا گیا۔

نجی ٹی وی ’’ڈان نیوز ‘‘ کے مطابق عظمیٰ اور طاہر کی محبت ملائیشیا میں پروان چڑھی جس کے بعد عظمیٰ نے پاکستان آنے کا فیصلہ کیا اور وہ گز شتہ سال یکم مئی کو براستہ واہگہ پاکستان پہنچیں۔نکاح کے بعد اچانک ڈاکٹر عظمیٰ غائب ہوگئیں، جس کے بعد ان کے شوہر نے اسلام آباد کے پولیس سٹیشن میں انہیں تلاش کرنے کے لیے درخواست جمع کرائی۔پھر ایک روز اس کہانی نے ڈرامائی موڑ لیا اور اچانک یہ خبر سامنے آئی کہ عظمیٰ نے اسلام آباد میں قائم بھارتی ہائی کمیشن میں پناہ لے کر اپنے شوہر پر الزام عائد کردیا کہ انہوں نے انہیں اغوا کیا۔آخر کارمعاملہ پاکستان اور ہندوستان کی حکومتوں نے بھی اٹھایا اور پھر ڈاکٹر عظمیٰ کو اسلام آباد کی عدالت میں پیش کیا گیا جہاں اس بھارتی لڑکی نے الزام عائد کیا کہ ان کی شادی ’گن پوائنٹ‘ پر کرائی گئی جبکہ انہیں ’ہراساں‘ بھی کیا گیا۔

ڈاکٹر عظمیٰ نے اسلام آباد کی مقامی عدالت میں 506 ضابطہ فوجداری کے تحت درخواست دائرتے ہوئے یہ الزام بھی عائد کیا کہ اسے زیادتی کا نشانہ بھی بنایا گیا جبکہ عدالت نے نکاح خواں اور گواہان کو نوٹس جاری کر تے ہوئے 11 جولائی تک جواب طلب کرلیاتھا،بھارتی شہری ڈاکٹر عظمیٰ اسلام آباد میں مجسٹریٹ حیدر علی شاہ کی عدالت میں پیش ہوئیں اور اپنا بیان ریکارڈ کرایا۔بعد ازاں یہ کیس اسلام آباد ہائی کورٹ میں بھی چلا، جس کے بعد عدالت نے انہیں ہندوستان جانے کی اجازت دے دی۔

واضح رہے کہ 7 مئی 2017 کو یہ خبریں سامنے آئی تھیں کہ نئی دہلی کی رہائشی بھارتی شہری ڈاکٹر عظمٰی نے پاکستان آکر پاکستانی شہری طاہر سے پسند کی شادی کرلی تھی، اب اطلاعات ہیں اس معاملے پر ایک بالی ووڈ فلم بنے گی ،فلم میں ڈاکٹر عظمیٰ کا کردار بالی ووڈ بولڈ اداکارہ’’ الیانا ڈی کروز‘‘ ادا کریں گی، تاہم اس حوالے سے تصدیق ہونا ابھی باقی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /تفریح