تاجر برادری کا ایف بی آر چھاپے رکوانے کیلئے لاہور چیمبر سے رجوع

تاجر برادری کا ایف بی آر چھاپے رکوانے کیلئے لاہور چیمبر سے رجوع

لاہور(نیوز رپورٹر) تاجر برادری نے فیڈرل بورڈ آف ریونیو کی جانب سے کاروباری مقامات پر مسلسل چھاپوں پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے انہیں رکوانے کے لیے لاہور چیمبر سے مدد طلب کی ہے۔ قائداعظم انڈسٹری اسٹیٹ کے ایک وفد نے لاہور ٹاؤن شپ انڈسٹریز ایسوسی ایشن کے چیئرمین خرم الیاس کی سربراہی میں لاہور چیمبر کے سینئر نائب صدر خواجہ شہزاد ناصر اور نائب صدر فہیم الرحمن سہگل سے ملاقا ت کی اور انہیں آگاہ کیا کہ ایف بی آر کا عملہ قبل از وقت نوٹس دئیے بغیر کاروباری مراکز پر چھاپے مار اور صنعتکاروں کو ہراساں کررہا ہے جس سے کاروباری ماحول بری طرح خراب ہورہا ہے۔

ایسوسی ایشن کے سینئر نائب چیئرمین حافظ عمران، وائس چیئرپرسن مس مہوش، اقبال بیگ چغتائی ، شیخ محمد ایوب ، امجد علی جاوا اور صنعتکاروں کی بڑی تعداد اس موقع موجود تھی۔

وفد نے کہا کہ ٹیکس ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے ایسے سرگرمیاں کاروبار چلانے میں رکاوٹ کا باعث بن رہی ہے۔ انہوں نے وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر سے مطالبہ کیا کہ حکومت ٹیکس حکام کے صوابدیدی اختیارات معطل کریں اور فوری طور پر کاروباری مراکز پر چھاپے بند کروائے، اس کے بغیر حکومت محاصل اکٹھا کرنے کا ہدف پورا نہیں کر سکے گی جبکہ تاجر بھی کاروبار بند کرکے احتجاج پر مجبور ہونگے۔لاہور چیمبر کے سینئر نائب صدر خواجہ شہزاد ناصر اور نائب صدر فہیم الرحمن سہگل نے کہا کہ کاروباری مقامات پر چھاپے اور تاجروں کی تذلیل بنیادی انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہے۔ ایف بی آر کو چاہیے کہ وہ ملکی معیشت کے استحکام اور ملکی مفاد کے لئے کاروباری برادری کا ساتھ دے اور اہلکاروں کو صوابدیدی اختیارات کے غلط استعمال سے روکے۔ انہوں نے کہا کہ ٹیکس حکام کی جانب سے اس طرح کے رویہ سے نہ صرف حکومت کا نام خراب ہو گا بلکہ ملک میں کاروباری ماحول پر بھی بہت بُرا اثر ہو گا اور لوگ ٹیکس نیٹ سے دور ہوں گے۔

مزید : کامرس