تحفظ رسالت کیلئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے ،مولانا ہدایت اللہ

تحفظ رسالت کیلئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے ،مولانا ہدایت اللہ

مہمند ( نمائندہ پاکستان) مہمند ، جمعیت علمائے اسلام پاکستان بننے کیلئے بے شمار قربانیاں دی گئی ہیں۔ تحفظ رسالت کیلئے سروں پر کفن باندھ کر نکلیں گے۔ قائد مولانا فضل الرحمن کے حکم کے مطابق وزیرستان ملین مارچ میں ضلع مہمند کی طرف سے بھر پور شرکت کرینگے۔ جمعیت طلباء اسلام غلنئی کے نقش قدم پر چل کر پارٹی کیلئے ہر قسم کی قربانی دینگے۔ ان خیالات کا اظہار جامعتہ العلوم اسلامیہ غلنئی میں جمعیت طلباء اسلام ضلع مہمند تحفظ ناموس رسالت کے اجتماع سے مرکزی کنوینئر پاکستان مولانا ہدایت اللہ پیرزادہ، قبائلی اضلاع کے کنوینئر عطاء الرحمن مسعود، سابقہ کنوینئر قبائلی اضلاع عمر بھیٹنی، جے یو آئی ضلع مہمند کے امیر مولانا مفتی محمد عارف حقانی، سابقہ سنیٹر حافظ رشید احمد، مولانا سمیع اللہ، مولانا ضیاء الرحمن، مولانا گلاب نور ، مولانا عبدالبصیر، مولانا لیاقت علی، مولانا بسم اللہ، مولانا عبدالجبار، سابقہ جی ٹی آئی صدر مولانا تاج ولی صافی، ضلعی کنوینئر اسرار الدین و دیگر مقررین نے کیا۔ انہوں نے کہا کہ علمائے کرام کی رہنمائی کے بغیر زندگی نا مکمل ہوگی۔ ریاست مدینہ کا دعوہ کرنے والی حکومت نے اسیہ ملغونہ کو رہا کر کے ناموس رسالت کی توہین کی ہے۔ ریاست مدینہ میں تمام لوگ نماز اور حیاء کے پابند تھے۔ مگر یہاں یہ اُلٹا خواتین کو فحاشی پھیلانے میں سب سے آگے ہیں۔ کیونکہ اسلام آباد میں خواتین کے عالمی دن کی مناسبت سے جو ریلی نکالی گئی اور اُن خواتین کے ہاتھوں میں جو چارٹ تھے اُ سے بے حیائی رونماء تھی۔اُن چارٹوں پر میرا جسم میری مرضی ، میرا لباس سمیت دیگر بیہودہ فقرے لکھے گئے تھے جو کہ حکومت کیلئے انتہائی شرم کی بات ہے۔ پاک فوج نے دلیری کا مظاہرہ کرتے ہوئے دو جہازوں مار گرائے اور پائلٹوں کو حراست میں لئے گئے مگر وزیر اعظم عمران خان نے بزدلی کا مظاہرہ کرتے ہوئے زخمی پائلٹ کو چوری چپے رہا کر دیا جبکہ دوسرے کو دو تین دن بعد رہا کر دیا ۔ علمائے دیو بند نے اس ملک کی آزادی اور بقاء و سلامتی کیلئے خون کی قربانی دی ہے۔ حکمرانوں نے 1973 ء آئین کا خلیہ بگاڑ دیا ہے۔ حکومت اسرائیل کی سر پرستی چھوڑ دے۔ عمران خان نے جب حلف اُٹھا رہے تھے تو اُس وقت اُن کی زبان پرخاتم النبیین کے الفاظ تک نہیں آرہے تھے۔ اُن کے ایک وفاقی وزیر نے اللہ تعالیٰ کے بعد عمران خان کو بڑا درجہ دیا ہے۔ جو کہ اسلام کا مذاق اُڑایا جا رہا ہے۔ ہم قائد مولانا فضل الرحمن کے حکم پر اپنے سروں پر کفن باندھ کر توہین رسالت، مدارس، مساجد اور علمائے کرام کے تحفظ کیلئے ہمہ وقت تیار ہیں۔ اور وزیرستان ملین مارچ ضلعی امیر مولانا مفتی محمد عارف حقانی کے زیر قیادت بطور لشکر جائینگے۔ اور وہاں ثابت کرینگے کہ ضلع مہمند میں بھی جے ٹی آئی اور جے یو آئی پارٹی مکمل طور پر فعال اور مضبوط ہے۔ اور ہر حالت میں اسلام کی سر بلندی کیلئے کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر