امریکہ میں 34 سال بعد کسی مافیا ڈان کا قتل ، یہ کون تھا اور کون سے جرائم پیشہ گروہ کا سربراہ تھا؟ تفصیلات سامنے آگئیں

امریکہ میں 34 سال بعد کسی مافیا ڈان کا قتل ، یہ کون تھا اور کون سے جرائم پیشہ ...
امریکہ میں 34 سال بعد کسی مافیا ڈان کا قتل ، یہ کون تھا اور کون سے جرائم پیشہ گروہ کا سربراہ تھا؟ تفصیلات سامنے آگئیں

  

نیو یارک (ڈیلی پاکستان آن لائن) امریکہ میں نیو یارک سے تعلق رکھنے والی مافیا فیملی کے سربراہ فرانسسکو کیلی (فرینکی بوائے) کو گھر کے باہر گولیاں مار کر قتل کردیا گیا ۔ امریکہ میں کسی مافیا فیملی کے سربراہ کا آخری قتل 1985 میں ہوا تھا جس کے 34 سال بعد فرینکی بوائے کو 6 گولیاں مار کر اس کی لاش کو گاڑی تلے روند دیا گیا۔

فرینکی بوائے مافیا خاندان گیمبینو کے سربراہ تھے جنہیں سٹیٹن آئی لینڈ کی ٹوٹ ہل ڈسٹرکٹ میں گولیاں مار کر قتل کردیا گیا ۔ عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ نیلی کار میں سوار ایک شخص نے فرینکی کو گھر کے باہر گلی میں 6 سے 7 گولیاں ماریں اور فرار ہونے سے پہلے انہیں اپنی گاڑی تلے روندا جس کے بعد وہ وہاں سے فرار ہوگیا۔ فرینکی بوائے کو جب ہسپتال لے جایا گیا تو ان میں زندگی کی رمق باقی تھی لیکن وہ خون زیادہ بہہ جانے کے باعث جانبر نہ ہوسکے۔

گیمبینو خاندان کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ یہ ان پانچ تاریخی امریکی، اطالوی مافیا خاندانوں میں سے ایک ہے جو نیو یارک میں بستے ہیں۔سٹیٹن آئی لینڈ میں ٹوٹ ہل کا علاقہ جرائم کی آماجگاہ سمجھا جاتا ہے۔ جینویزئے، گیمبینو، لوکیسے، کولمبو اور بونانو مافیا خاندانوں کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ وہ گذشتہ کئی دہائیوں سے نیو یارک میں منظم جرائم کو کنٹرول کر رہے ہیں۔

خیال رہے کہ اس سے قبل نیویارک میں کسی مافیا ڈان کا آخری قتل 1985 میں ہوا تھا۔ یہ قتل بھی گیمبینو خاندان کے سربراہ کا ہی ہوا تھا۔ پال کیستیلانو کو ایک ریستوران میں قتل کیا گیا تھا۔ بدھ کے روز قتل ہونے والے فرانسیسکو کیلی کے بارے میں خیال ہے کے انہوں نے 2015 میں ڈومینیکو سیفالو سے تنظیم کی سربراہی حاصل کی تھی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس