شرقپور 2سالہ بچہ اغوء کے بعد قتل لاش کچرے سے برآمد

شرقپور 2سالہ بچہ اغوء کے بعد قتل لاش کچرے سے برآمد

  



شرقپور شریف،فیروزوالہ، شیخوپورہ(نامہ نگار،نمائندہ پاکستان، بیورو رپورٹ) شرقپور کے نواحی گاؤں تریڈیوالی میں دو سالہ کم سن عبداللہ کو نا معلوم افراد نے اغواء کرنے کے بعد قتل کر کے لاش گاؤں کے کچرے میں پھینک دی۔ علاقے میں خوف و ہراس والدین اور عزیز و اقارب پر غشی کے دورے کمسن بچے کے قتل پر ہر آنکھ اشکبا ر تھی بتایا گیا ہے کہ شرقپور کے نواحی گاؤں تریڈیوالی کے رہائشی عبدالرحمن کا د و سالہ بیٹا عبداللہ جمعرات کے دن دس بجے کے قریب اپنے گھر سے کھیلتاہوا گھر سے باہر آ گیا اور گلی میں کھیلتا رہا اچانک بچہ لا پتہ ہو گیا جس کی تلاش گاؤں میں ہر طرف کی گئی لیکن بچہ نا ملا جس پر عبدالرحمن نے اپنے بیٹے عبداللہ کے اغواء کا مقدمہ تھانہ شرقپور میں درج کروا دیا گزشتہ جمعہ کے روز صبح 8 بجے کے قریب گاؤں کے کچرے پر کمسن بچے کی لاش پڑی ہوئی ملی جس پر گاؤں کے لوگوں نے تھانہ شرقپور پولیس کے اطلاع کی جس پر پولیس نے موقع پر پہنچ کر لاش قبضے میں لے کر پوسٹ مارٹم کیلئے تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال شرقپور بھیج دی شواہد اکٹھے کرنے شروع کر دیے دو سالہ کم سن عبداللہ کے قتل پر ہر آنکھ اشکبار تھی عزیز و اقارب پر غشی کے دورے پڑھ رہے تھے کہ ہمارے لخت جگر کو کس سنگدل شخص نے اغوا ء کرنے کے بعد قتل کیا ہے تھانہ شرقپور پولیس کا کہنا ہے کہ تفتیش کی جا رہی ہے جلد قاتل کو گرفتار کر لیا جائے گا پوسٹ مارٹم کے بعد لاش لواحقین کے حوالے کر دی گئی ہے۔

بچہ اغواء

مزید : صفحہ آخر /رائے