صاف پانی کیس ہائیکورٹ کا تمام اداروں کو واٹر کمیشن سے تعا ون کا حکم

صاف پانی کیس ہائیکورٹ کا تمام اداروں کو واٹر کمیشن سے تعا ون کا حکم

  



لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے تمام اداروں کو واٹر کمیشن سے مکمل تعاون کا حکم دے دیا،عدالت نے یہ حکم زیرزمین پانی محفوظ بنانے کے لئے دائر درخواست کی سماعت کے دوران جاری کئے،دوران سماعت مسٹر جسٹس شاہد کریم نے ریمارکس دیئے کہ پی ایس ایل میچوں پر کروڑوں روپے لگادیئے گئے لیکن صاف پانی بچانے اورماحولیاتی آلودگی کے خاتمے کے لئے حکومت کچھ نہیں کررہی،گزشتہ روز واٹر کمیشن پنجاب کے فوکل پرسن نے کارکردگی رپورٹ عدالت میں پیش کرتے ہوئے عدالت کوبتایا کہ واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹ نہ لگانے والی فیکٹریوں کو نوٹس بھجوادیئے گئے ہیں،خلاف ورزی کرنے والی فیکٹریوں کے خلاف قانون کے مطابق کاروائی کی جارہی ہے،عدالت نے ریمارکس دئیے صاف پانی بچانے اورماحولیاتی آلودگی کے خاتمے کے لئے حکومت کچھ نہیں کررہی، پی ایس ایل میچوں پر کروڑوں روپے لگا دیئے گئے،صاف پانی اورصاف ہواانسانی زندگیوں کا مسئلہ ہے لیکن حکومت اس معاملے میں ہاتھ پر ہاتھ دھرے بیٹھی ہے،عدالت نے تمام اداروں کو واٹر کمیشن سے مکمل تعاون کا حکم دیتے ہوئے سماعت ملتوی کر دی،دریں اثناء فاضل جج نے پولی تھین بیگز پر پابندی کے لئے دائر درخواست کی سماعت کے دوران قراردیاکہ لاہورکے بعد صوبہ بھر میں پلاسٹک بیگز پرپابندی عائد کی جائے گی۔

صاف پانی کیس

مزید : صفحہ آخر /رائے