کرپشن سے متعلق کیسز کو منطقی انجام تک پہنچایا جائے،جام اکرام دھاریجو

      کرپشن سے متعلق کیسز کو منطقی انجام تک پہنچایا جائے،جام اکرام دھاریجو

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر) صوبائی وزیر برائے انسداد بدعنوانی جام اکرام اللہ دھاریجو کی زیرصدارت یہاں ایک اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس کا مقصد اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ ایسٹ زون کراچی میں زیر سماعت ہائی پروفائل کیسز / معاملات کا جائزہ لینا تھا۔ چیئرمین اینٹی کرپشن محمد وسیم احمد، ڈائریکٹر سہیل احمد قریشی اور دیگر افسران بھی اجلاس میں شریک ہوئے۔ اجلاس کو بریفنگ دیتے ہوئے ڈائریکٹر اینٹی کرپشن سہیل احمد قریشی نے بتایا کہ محکمہ محکمہ ایکسائز کے افسران / اہلکاروں اور ان سے مستفید ہونے والوں کے خلاف چھ مقدمات کی تحقیقات جاری ہیں اور چالان پیش کیے جارہے ہیں۔ مذکورہ افسران اور عملے کے اراکین غیر قانونی گاڑیوں کی غیر قانونی رجسٹریشن کے لئے جعلی دستاویزات بنانے میں ملوث پائے گئے۔ انہوں نے مزید کہا، '(ایم اینڈ آر) بحالی اور مرمت کے نام پر کئے گئے فنڈز کی غلط تقسیم / غیر قانونی کاموں میں ملوث ہونے کے الزام پر سابق انسپکٹر جنرل پولیس کلیم امام اور دیگر کے دفاتر کے اچانک دورے کئے گئے اور دیگر اضلاع میں بڑے پیمانے پر مرمت اور بحالی کے بجٹ میں غبن سے متعلق شکایت پر کارروائی کی گئی۔ اجلاس کو مزید کہا گیا کہ ٹھٹھہ میں غیر معیاری کاموں کے الزامات پر ایگزیکٹو انجینئر ایجوکیشن ورکس ڈویژن ضلع ٹھٹھہ اور دیگر کے دفاتر پر بھی چھاپے مارے گئے۔ علاوہ ازیں ڈی ایم سی ملیر / دیگر کے افسران اور اہلکاروں کے خلاف ناجائز استعمال اور فنڈز کے غبن اور 300 ملین روپے کے منظور شدہ بجٹ میں گھپلوں کی شکایات پر کارروائی کی گئی۔اس کے علاوہ نیا ناظم آباد اور سکیم 33 کی اراضی میں دھوکہ دہی اور گلشن ٹان اور جمشاد ٹان میں عمارتوں کی غیر قانونی تعمیر سے متعلق محکمہ ریونیو اور ایس بی سی اے کے خلاف بھی متعدد مقدمات کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ پرنسپل گورنمنٹ ڈگری گرلز کالج نارتھ کراچی کے خلاف بھی بجٹ کے غلط استعمال میں ملوث ہونے پر کارروائی کی گئی۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے محکمہ انسداد بدعنوانی، صنعت و تجارت اور کوآپریٹو محکمہ جام اکرام اللہ دھاریجو نے افسران کو ہدایت کی کہ وہ ان معاملات پر سخت محنت کریں اور انہیں منطقی انجام تک پہنچائیں اور اس میں ملوث افراد کو سزا دلوائی جائیں تاکہ کوئی بھی افسر / اہلکار بدعنوانی کی جرات نہ کرسکے۔ انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری اور وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ کی واضح ہدایت ہے کہ وہ سندھ کے محکموں میں کسی قسم کی بدعنوانی برداشت نہ کریں اور کرپٹ مافیا کے خلاف بھرپور کارروائی کی جائے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر