ذخیرہ اندوزوں‘ ناجائز منافع خوروں کیخلاف شکنجہ تیار‘ طاہر یوسف

ذخیرہ اندوزوں‘ ناجائز منافع خوروں کیخلاف شکنجہ تیار‘ طاہر یوسف

  



رحیم یارخان(بیورورپورٹ)سیکرٹری آثار قدیمہ پنجاب طاہر یوسف نے کہا ہے کہ حکومت پنجاب ذخیرہ اندوزوں اور ناجائز منافع خوروں کے خلاف سخت قانونی (بقیہ نمبر39صفحہ12پر)

اقدامات اٹھا رہی ہے جبکہ مصنوعی مہنگائی کے خاتمہ کیلئے وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثما ن بزدار کی ہدایت پر صوبائی کابینہ سمیت اعلیٰ افسران فیلڈ وزٹ کرکے انتظامی کارکردگی کا جائزہ لے رہے ہیں۔یہ بات انہوں نے ڈپٹی کمشنر آفس میں منعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر(جنرل)شیخ محمد طاہر، اسسٹنٹ کمشنرز چوہدری اعتزاز انجم، ارشد وٹو سمیت ضلع کے تمام پرائس کنٹرول مجسٹریٹس موجود تھے۔طاہر یوسف نے کہا کہ رمضان المبارک سے قبل اشیاء روزمرہ کے نرخوں کو کنٹرول میں رکھنے کیلئے مربوط حکمت عملی مرتب کی جائے اور رمضان المبارک میں زیادہ استعمال ہونے والی پھل و سبزیوں سمیت کریانہ آئٹم کے نرخوں اور دستیابی کی روزانہ مانیٹرنگ کی جائے۔انہوں نے کہا کہ اشیاء خورونوش کی مقررہ نرخوں پر باآسانی دستیابی صارفین کا بنیادی حق ہے اور ضلعی انتظامیہ بالخصوص پرائس کنٹرول مجسٹریس کی ذمہ داری ہے کہ وہ مارکیٹ کے تسلسل کے ساتھ وزٹ کرتے ہوئے صارفین کے مفاد کا تحفظ یقینی بنائیں۔قبل ازیں صوبائی سیکرٹری پنجاب کو بریفنگ دیتے ہوئے ایس این اے جام محمد نعیم نے بتایا کہ ڈپٹی کمشنر علی شہزاد کی سربراہی میں دسمبر2019سے ابتک پرائس کنٹرول مجسٹریٹ 51ہزار97انسپکشن کرتے ہوئے 4ہزار261خلاف وزری کے مرتکب دکانداران کو67لاکھ43ہزار400روپے جرمانہ،57ایف آئی آر اور29افراد کو گرفتار کروایا ہے، کسان پلیٹ فارم پر2ہزار285کسانوں نے 93ہزار631افراد کو اپنی زرعی اجناس فروخت کی،ضلع کے تمام اہم مقامات اور چھوٹی بڑی دکانوں پر عوامی آگہی کیلئے ریٹ لسٹ آویزاں کرائی گئی ہیں، قیمت پنجاب ایپ پر ضلع بھر میں 871شکایات موصول ہوئی جس میں سے870کو حل کیا گیا، اشیاء میں ملاوٹ کے خلاف ضلعی انتظامیہ نے پنجاب فوڈ اتھارٹی کے ہمراہ مل کر کارروائی کرتے ہوئے1898انسپکشن کی اور275افراد کو19لاکھ89ہزار500جرمانہ،47کاروباری مراکز و کارخانے سربمہر،1ایف آئی آراور45سیمپل لیے، 6ہزار980کلو گرام ملاوٹ شدہ سرخ مرج،537لٹر دودھ تلف کیا، چینی کی ذخیرہ اندوزی کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے 17مقامات سے35ہزار202ذخیرہ کی گئی چینی قبضہ میں لیکر3لاکھ85ہزا رجرمانہ عائد کیا گیا جبکہ ضلع میں 5سیل پوائنٹس بنا کر ذخیرہ کی گئی چینی70روپے فی کلو گرام فروخت کی جا رہی ہے، ضلع میں سستے آٹاکے 1034سیل پوائنٹس ہیں جس پر آٹا805روپے میں فروخت کیا جا رہا ہے، رواں گندم خریداری مہم کے سلسلہ میں ضلع کی تین تحصیلوں میں 20خریداری مراکز بنائے جائیں گے اور مجموعی خریداری ٹارگٹ1لاکھ47ہزار50میٹرک ٹن تجویز کیا گیا ہے۔

طاہر یوسف

مزید : پشاورصفحہ آخر