کرونا وائرس سے شہر کی سڑکیں ویران، سیاح غائب، بھوکے بندروں کے غول بھی باہر آگئے، ویڈیو وائرل

کرونا وائرس سے شہر کی سڑکیں ویران، سیاح غائب، بھوکے بندروں کے غول بھی باہر ...
کرونا وائرس سے شہر کی سڑکیں ویران، سیاح غائب، بھوکے بندروں کے غول بھی باہر آگئے، ویڈیو وائرل

  



بنکاک (ویب ڈیسک) کورونا وائرس کی وبا پھیلنے سے قبل تھائی لینڈ سیاحوں کی جنت سمجھا جاتا تھا تاہم اب باقی دنیا کی طرح یہاں بھی سڑکیں ویران ہیں، گلیوں میں خاموشی کا راج ہے اور لوگ اپنے گھروں میں رہنے کو ترجیح دیتے ہیں،ان حالات میں تھائی لینڈ میں رہنے والے بندروں کا برا حال ہے، انہیں ہمیشہ سیاحوں کے ہاتھوں کھانے پینے کی وافر اشیا میسر آ جاتی تھیں لیکن اب وہ بھی خوراک کی تلاش میں غول در غول گلیوں میں پھر رہے ہیں۔

ان بندروں کی آپس میں لڑائیاں بھی جاری ہیں اور یہ چوری بھی کر رہے ہیں، شہریوں کا کہنا ہے کہ انہوں نے اتنی بڑی تعداد میں بندروں کے گروہ سڑکوں پر پھرتے نہیں دیکھے۔مقامی افراد ان واقعات کی ویڈیوز بنا کر سوشل میڈیا پر ڈال رہے ہیں، ایک وائرل ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ ایک بندر کو کیلا ملا تو سینکڑوں بندروں نے اس پر حملہ کر دیا اور ایک فساد سا پھیل گیا۔

تھائی لینڈ کے شہر لاپ بری سے ایک شہری نے ٹوئٹ کیا ہے کہ کورونا وائرس کے باعث سیاحوں نے شہر چھوڑ دیا ہے اس لیے بھوکے بندروں نے یہاں یلغار کر دی ہے۔بندروں کی لڑائی کی ویڈیو شیئر کرتے ہوئے تھائی شہری کا کہنا تھا کہ بہت جلد ان بندروں کو سمجھ آ جائے گی کہ ایک بالغ شخص کو گرانے کے لیے صرف چار بندر کافی ہیں۔

تھائی لینڈ کے میڈیا کا کہنا ہے کہ فروری کے مہینے میں کورونا وائرس کے باعث ملک میں 44 فیصد سیاح کم آئے ہیں۔یاد رہے کہ سیاحت تھائی لینڈ کی مجموعی قومی پیداوار کا 11 فیصد ہے۔ اس برس جی ڈی پی کی شرح دو فیصد سے بھی کم رہنے کا خدشہ ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس