جہلم میں شادی کی تقریب پر پولیس کا چھاپہ، نکاح خواں نے ہی دوڑیں لگادیں کیونکہ ۔ ۔ ۔

جہلم میں شادی کی تقریب پر پولیس کا چھاپہ، نکاح خواں نے ہی دوڑیں لگادیں کیونکہ ...
جہلم میں شادی کی تقریب پر پولیس کا چھاپہ، نکاح خواں نے ہی دوڑیں لگادیں کیونکہ ۔ ۔ ۔

  



جہلم (ویب ڈیسک) پنجاب کے ضلع جہلم میں پولیس نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے13 سالہ بچی کی شادی رکوا دی جب کہ دولہے اور اس کے والد کو گرفتار کر لیا ہے،پولیس حکام کے مطابق دلہن کے والد کی گرفتاری بھی عمل میں لائی گئی ہے جب کہ نکاح خواں موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگیا۔

ہم نیوز کے مطابق پولیس حکام کی طرف سے ذرائع ابلاغ کو بتایا گیا کہ 13 سالہ بچی کی زبردستی شادی کی جا رہی تھی اور ولیس نے اطلاع ملنے پر بروقت کارروائی کی۔پولیس حکام کا کہنا تھا کہ ملزمان حافظ رحمت، علی، معراج اور سلیمان کیخلاف مقدمہ درجہ کر کے مزید کارروائی شروع کردی گئی ہے۔ ملزمان کوکم عمرشادی کی خلاف ورزی کے مقدمے نامزد کیا گیا ہے۔

نکاح خواں حافظ رحمت موقع سے فرار ہوگیا ہے جس کی تلاش کیلئے مختلف مقامات پر چھاپے مارے جا رہے ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /علاقائی /پنجاب /جہلم