پی پی پی لیڈیز ونگ نے دبئی میں خواتین کے حقوق کا عالمی دن منایا

پی پی پی لیڈیز ونگ نے دبئی میں خواتین کے حقوق کا عالمی دن منایا
پی پی پی لیڈیز ونگ نے دبئی میں خواتین کے حقوق کا عالمی دن منایا

  



دبئی (طاہر منیر طاہر) 1975ءکو بین الاقوامی طور پر خواتین کا سال قرار دیا گیا تھا جبکہ یونائیٹڈ نیشن کی جنرل اسمبلی کے ایک اجلاس میں آٹھ مارچ کو خواتین کے حقوق کا عالمی دن منانے کا اعلان کیا گیا۔ 1977ءسے یہ دن پوری دنیا میں باقاعدگی سے منایا جانے لگا۔

پوری دنیا کی طرح اس سال 8 مارچ کو بھی متحدہ عرب امارات میں اس دن کو منانے کے لئے خواتین کی مختلف تقاریب ہوئیں۔ ان میں ایک تقریب دبئی میں ہوئی جس کا اہتمام پاکستان پیپلزپارٹی گلف و مڈل ایسٹ کی سیکرٹری نجمہ جیلانی نے کیا تھا جس میں پی پی پی مڈل ایسٹ کے صدر میاں منیر ہانس نے خصوصی طور پر شرکت کی۔ دیگر شرکاءمیں شیریں درانی، ذوالفقار مغل، نجمہ شاہ، سمیعہ ناز، نجمہ احسان، طاہرہ مغل، تسنیم منور، نثار خٹک، ملک اسلم، عرفان قمر، رضوان عبداللہ، شفیق صدیقی، امین سرگانہ، اعجاز لاشاری، نیاز خان شانگلہ، خرم شہزاد، سمیع اخون، خیل، ندیم شیخ، اللہ دتہ، ثمینہ خالد اور فہمیدہ شاہد بھی موجود تھیں۔ اس موقع پر کیک کاٹا گیا اور خواتین کے حقوق کے بارے بات چیت ہوئی۔

شرکائے تقریب نے کہا کہ اقوام متحدہ نے ہر سال 8 مارچ کو خواتین کا بین الاقوامی دن قرار دے کر اس بات کا ثبوت دیا ہے کہ پوری دنیا خواتین کے حقوق کے حصول کے لیے ان کے ساتھ کھڑی ہے۔ شرکائے تقریب نے کہا کہ اقوام متحدہ نے ہر سال 8 مارچ کو خواتین کا بین الاقوامی دن قرار دے کر اس بات کا ثبوت دیا ہے کہ پوری دنیا خواتین کے حقوق کے حصول کے لئے ان کے ساتھ کھڑی ہے۔

شرکائے تقریب نے کہا کہ براعظم ایشیاءمیں آج بھی خواتین کے بنیادی حقوق کی پامالی ہورہی ہے اور بیچاری عورت سماج کے ہاتھوں ظلم و ستم کا شکار ہے اور حالات کی چکی میں پس رہی ہے۔ پاکستان میں بھی عورتوں کو بے شمار مسائل کا سامنا ہے خاص طور پر گھر سے باہر نکل کر کام کرنے والی خواتین کو دہرے مسائل کا سامنا ہے۔ ہماں ہاں عورتوں کے تحفظ کے لئے قانون تو موجود ہے لیکن اس پر صحیح معنوں میں عمل نہیں ہورہا۔ یہی وجہ ہے کہ خواتین ہر جگہ ہراسمنٹ کا شکار ہوتی ہیں۔ ایسی ہی خواتین کو سہارا دینے اور ان میں قوت بیان پیدا کرنے کے لئے خواتین کا بین الاقوامی دن منایا جاتا ہے تاکہ مسائل زدہ خواتین کو سپورٹ مل سکے۔

شرکائے تقریب نے کہا کہ ہم بیرون ملک رہتے ہوئے بھی پاکستان میں خواتین کے ساتھ ہیں اور ان کے بنیادی حقوق کے حصول کے لئے کوششوں میں مصروف ہیں۔ تقریب کے آخر میں میزبان نجم جیلانی نے تمام شرکائے تقریب کا شکریہ ادا کیا اور ڈنر سے تواضع کی۔

مزید : عرب دنیا /تارکین پاکستان