کسی پاکستانی ادارے پر سائبر حملہ جارحیت ہو گا، جواب کیلئے ٹیمیں بنا دیں: امین الحق

کسی پاکستانی ادارے پر سائبر حملہ جارحیت ہو گا، جواب کیلئے ٹیمیں بنا دیں: ...

  

      کراچی(این این آئی) جسٹس ہیلپ لائن کے تحت کراچی کے مقامی ہوٹل میں سائبر سکیورٹی پر کانفرنس کا انعقاد کیا گیا۔ کانفرنس میں سائبر ممبران سابق کلکٹر کسٹم ایف بی آر ڈاکٹر شہاب امام، تارہ عذرا داؤد، خالد شمسی، فہاد کھتری، سینئر صحافی فیصل عزیز خان، فیصل ندیم ممبر فارن کونسل ایلیشن نے شرکت کی جبکہ کانفرنس کے مہمان خصوصی وفاقی وزیر آئی ٹی امین الحق تھے۔ جسٹس ہیلپ لائن کے صدر ندیم شیخ ایڈووکیٹ اور جنرل سیکریٹری حارث امین بھٹی نے کانفرنس کے انعقاد کے مقاصد پیش کیے۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے سائبر ماہرین نے کہا کمپیوٹر یا موبائل پر معلومات رکھنے کا مطلب یہ نہیں دوسروں تک اس کی رسائی ممکن نہیں، کلاؤڈ پر محفوظ ڈیٹا نجی نہیں رہتا۔ ہر طرح کی یو ایس بیز اور سی ڈیز اپنے کمپیوٹر میں ڈالنا خطرے کی بات ہے۔ وفاقی وزیر آئی ٹی امین الحق نے کہا پاکستان کے کسی ادارے پر سائبر حملہ جارحیت تصور ہوگا۔ سائبر حملے کے جواب کیلئے ٹیمیں بنادی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کے 5 بڑے شہروں میں رواں سال دسمبر میں فائیو جی ٹیکنالوجی لانچ کریں گے۔ اس موقع پر سائبر ماہرین ڈاکٹر شہاب امام، حارث امین بھٹی، فہاد کھتری، تارہ عذرا داؤد، فیصل ندیم، فیصل عزیز خان میں ایوارڈز بھی تقسیم کیے گئے۔ آخر میں سلیم مائیکل ایڈووکیٹ نے مہمانوں کا شکریہ ادا کیا۔

امین الحق

مزید :

صفحہ آخر -