سندھ،پیپلز پارٹی اور جمعیت علما اسلام ایک بار پھر آمنے سامنے

سندھ،پیپلز پارٹی اور جمعیت علما اسلام ایک بار پھر آمنے سامنے

  

جیکب آباد(این این آئی)) سندھ میں پیپلز پارٹی اور جے یو آئی ایک بار پھر آمنے سامنے، شہیدمحترمہ بینظیر بھٹو کا تمسخر اڑانے کے بعد حالات کشیدہ، پیپلز پارٹی کے کارکنان نے سوشل میڈیا پر جے یو آئی قیادت کو آڑے ہاتھوں لے لیا۔ تفصیلات کے مطابق سندھ میں ایک دوسرے کی سخت سیاسی حریف جماعتیں پیپلز پارٹی اور جے یو آئی ایک بار پھر آمنے سامنے آگئی ہیں، چند روزقبل جے یو آئی کے ایک جلسے کے دوران مولانا محمد عیسیٰ سموں نے شہید محترمہ بینظیر بھٹو کے کہے چند لفظوں کی نقل اتارتے ہوئے ان کا تمسخر اڑایا تو وہ ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی جس پر پیپلز پارٹی سخت ناراض ہوئی اور جواباً پیپلز پارٹی کے کارکنان نے جے یو آئی قیادت کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے سخت تنقید کا نشانہ بنایا جس کے بعد جے یو آئی سندھ کے جنرل سیکریٹری علامہ راشد محمود سومرو نے شہید محترمہ بینظیر بھٹو کے متعلق مولانا محمد عیسیٰ سموں کی گفتگو کی مذمت کی اور پیپلز پارٹی کے کارکنان سے معذرت کی لیکن اس کے باوجود پیپلز پارٹی سندھ نے معاملے کوختم نہ کیا اور مسلسل جے یو آئی قیادت بشمول مولانا فضل الرحمن کے خلاف نازیبا الفاظ استعمال کئے، پیپلز پارٹی سندھ کی جانب سے سندھ کے مختلف شہروں میں راشد محمود سومرو اور مولانا محمد عیسیٰ سموں کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے ان کی تصاویر کی بے حرمتی کی گئی۔ 

پی پی،جے یوآئی 

مزید :

صفحہ آخر -