جام پور: ناجائز کٹویتاں‘ خواتین  پر تشدد‘ ناروا سلوک کا سلسلہ تیز 

  جام پور: ناجائز کٹویتاں‘ خواتین  پر تشدد‘ ناروا سلوک کا سلسلہ تیز 

  

جام پور(نمائندہ پا کستان)احساس پروگرام میں ناجائز کٹوتیاں، پرائیویٹ غنڈوں کے ہمراہ خواتین پر تشدد،بدتمیزی،ناروا سلوک کا سلسلہ جاری تفصیلات کے مطابق شہری محمد سلیم، کاشف علی، محمد اکرم، محمد قاسم،خلیل الرحمن، بچل مائی، شمائلہ بی بی، پروین مائی، کندن مائی، کلثوم بی بی، ثمرین بی بی، شازیہ خاتون، رضیہ (بقیہ نمبر41صفحہ6پر)

خاتون ودیگر نے میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے کہا کہ ہم اپنی خواتین کے ہمراہ احساس سنٹرجاتے ہیں جہاں احساس کارڈ سے رقم نکلوانے کی سہولت موجود ہے مگر وہاں پر موجود پرائیویٹ ٹاوٹ کٹوتی کے ذریعہ رقم نکلوالنے کا وعدہ کرتے ہیں ذرائع کے مطابق ڈیوائس مالکان نے ایک ہزار روپے یومیہ پر تین تین پرائیویٹ کارندے چھوڑ رکھے ہیں جو ڈیوٹی پر مامور پولیس اہلکاروں کے ناک کے نیچے سے کٹوتی کرتے ہیں اور حکومت کی طرف سے ملنے والی امدادی رقو م پر ڈاکہ ڈالتے ہیں، شہریوں نے کہا کہ جام پور میں ڈگری کالج بوائز اور کامرس کالج میں علی الاعلان ملنے والی امدادی رقوم سے کٹوتی کی جارہی جہاں نشاندہی کرنے پر بااثر مافیا دھمکیاں دینے لگتے ہیں،شہریوں نے ڈی سی راجن پور،اسسٹنٹ کمشنر جام پور سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -