سکھر، پولیس کی مجرمانہ غفلت،سماجی برائیاں عروج پرپہنچ گئیں 

سکھر، پولیس کی مجرمانہ غفلت،سماجی برائیاں عروج پرپہنچ گئیں 

  

سکھر(ڈسٹرکٹ رپورٹر)پولیس کی مجرمانہ غفلت،سکھر میں سماجی برائیاں عروج پرپہنچ گئیں، پولیس رشوت کے عیوض خاموش تماشائی،جواء،آکڑا پرچی،تھائی گیمز کا کھلے عام کاروبار، شہری حلقوں میں تشویش کی لہر، ایس ایس پی سکھر سے نوٹس لینے کا مطالبہ، تفصیلات کے مطابق سندھ کے تیسرے بڑے شہر سکھر میں پولیس کی رشوت وصولی اور مجرمانہ خاموشی کے باعث سکھر اور اسکے گرد نواح کے علاقوں میں آکڑا پرچی، جوئے سمیت تھائی گیمز کا کاروبار عروج پر پہنچ گیا ہے، پولیس کی عدم توجہی اور لاپرواہی کے باعث سکھر میں سماجی برائیوں کا راج قائم ہوتا دیکھائی دے رہا ہے، شہر کے مختلف علاقوں کی گلی کوچوں میں آکڑا پرچی فروخت کرنے والے دکانداروں نے بھتہ دینے کے بعد جگہ جگہ جوئے کے اڈے اور جوا پرچی کی دوکانیں کھل رکھی ہیں جبکہ حالیہ مارکیٹ میں آنے والی تھائی گیمز رتمو کا کاروبار نے بھی نوجوان نسل کو تباہ کررہا ہے شہر سکھر میں جوئے آکڑا پرچی کے بڑھتے ہوئے کاروبار پر شہری حلقوں میں گہری تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے اور انہوں نے سکھر پولیس کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے چیف جسٹس آف پاکستان، چیفآف آرمی اسٹاف، صدر پاکستان، وزیر اعظم، وزیر داخلہ، گورنر سندھ، وزیراعلیٰ سندھ اورآئی جی سندھ سے مطالبہ کیا ہے کہ شہر سے ان تمام سماجی برائیوں کا خاتمہ کیا جائے اور نوجوان نسل کو تباہ ہونے سے بچایا جائے۔

مزید :

صفحہ آخر -