کشمیر تحریک خواتین کا حریت رہنماﺅں کی نظربندیوں ،نوجوانوں کی گرفتاریوں کیخلاف مظاہرہ

کشمیر تحریک خواتین کا حریت رہنماﺅں کی نظربندیوں ،نوجوانوں کی گرفتاریوں ...

سرینگر (اے پی پی) کشمیر تحریک خواتین کی سربراہ زمرودہ حبیب نے حریت رہنماﺅں کی مسلسل نظربندی اور کشمیری نوجوانوں کی گرفتاریوں کے خلاف سرینگر میں ایک احتجاجی مظاہرے کی قیادت کی ۔ کشمیر میڈیاسروس کے مطابق آبی گزر سے سرینگر تک ایک احتجاجی مظاہرہ کیا گیا ۔مظاہرے کے شرکاءنے پلے کارڈ زاوربینرزا ٹھارکھے تھے جن پر انسانی حقوق کی پامالیوں،کشمیریوںکی بلاجواز گرفتاریوں اور مسلسل نظربندی کے خلاف نعرے درج تھے اور حریت رہنماﺅں ، کارکنوں اور نوجوانوں کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا گیا تھا۔

 زمرودہ حبیب نے اس موقع پر مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ جن سیاسی قائد ین،کشمیری نوجوانون اور طلبہ کو الیکشن کی آڑ میں گرفتار کیا گیا ہے ا±ن میں سے بیشتر کے خلاف کالا قانون پبلک سیفٹی ایکٹ لاگو کر کے انہیں جموں کی جیلوں میں منتقل کردیا گیا ہے ۔ انہوںنے کہاکہ قابض انتظامیہ دانستہ طورپر کشمیری نوجوانوں کے مستقبل کو تاریک کر رہی ہے اور ان کے اہلخانہ کو اپنے بچوں کی سلامتی کے بارے میں شدید تشویش لاحق ہے ۔انہوںنے کہاکہ مقبوضہ علاقے کے تمام پولیس اسٹیشنوں میں کشمیری نوجوانوںکو طلب کر کے انہیں ہراساں کر رہی ہے ۔ زمردہ حبیب نے کہا کہ بھارتی پولیس اہلکار بھی گھروں میں زبردستی داخل ہو کر کشمیریوں کو ہراساں اور لوٹ مار کر رہے ہیں۔

مزید : عالمی منظر


loading...