ایران کا جوہری پروگرام تا حال سنگین خطرہ ،یکطرفہ کاروائی کر سکتے ہیں ،اسرائیل

ایران کا جوہری پروگرام تا حال سنگین خطرہ ،یکطرفہ کاروائی کر سکتے ہیں ...

                 ٹوکیو(این این آئی)اسرائیلی وزیراعظم نے کہاہے کہ ایران کا جوہری پرگرام ابھی بھی ان سنگین خطرہ ہے اورہم اسے جوہری پروگرام سے روکنے کے لیے ہرممکن اقدام کریں گے ،غیرملکی میڈیا کے مطابق جاپانی وزیراعظم شنزوآبے کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اسرائیلی وزیراعظم نے کہاکہ ایران ایٹم بم بنانے کے قریب تر پہنچ چکا ہے اور اسے ایسے ہتھیار بنانے سے روکنے کے لئے اسرائیل یکطرفہ کارروائی کر سکتا ہے،انہوں نے کہاکہ جنوبی کوریاکے حالیہ ایٹمی تجربات بھی خطے کے لیے خطرے کی گھنٹی ہے ایران اورجنوبی کوریاکو ہرصورت اپنے جوہری پروگرام سے دستبردارہونا ہوگا، انہوں نے کہاکہ اسرائیل اورجاپان دونوں کو مشترکہ چیلنج کا سامناہے جاپان کو جنوبی کوریااوراسرائیل کو ایران کے جوہری پروگرام سے خطرات لاحق ہیں،اانہوں نے دعویٰ کیاکہ ایران ایٹمی ہتھیاروں کی تیاری کے قریب تر پہنچ چکا ہے لیکن تہران حکومت کو یہ باور کرانا ضروری ہو گا کہ اسے ایٹم بم بنانے کی اجازت نہیں دی جائے گی،انہوں نے کہاکہ امریکہ کے مقابلے میں اسرائیل ایران کے جوہری عزائم کو مختلف انداز سے دیکھتا ہے اور اس لئے تہران کے متنازع جوہری پروگرام کو روکنے کے لئے یکطرفہ ایکشن کیا جا سکتا ہے،انہوں نے کہاکہ امریکہ کے مقابلے میں ہم ایران کے زیادہ قریب ہیںہم زیادہ خطرے میں ہیں اس لئے ہمیں اس مسئلے کو حل کرنا ہو گا-

اسرائیلی سربراہ حکومت کا کہنا تھا کہ ایران میں حکومت کی تبدیلی کے باوجود تہران حکومت کی پالیسی میں کسی تبدیلی نہیں آئی ۔

مزید : عالمی منظر


loading...