کمپیوٹرائزڈ ریلوے پھاٹکوں کیلئے سروے کا فیصلہ

کمپیوٹرائزڈ ریلوے پھاٹکوں کیلئے سروے کا فیصلہ
کمپیوٹرائزڈ ریلوے پھاٹکوں کیلئے سروے کا فیصلہ

  


لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) پنجاب حکومت نے صوبے میں ریلوے پھاٹکوں پر بڑھتے ہوئے سنگین حادثات کے پیش نظر ان پھاٹکوں پر حادثات کی روک تھام کے لئے پھاٹکوں کا ازسر نو سروے کرانے کا فیصلہ کیا اور پنجاب میں کراچی طرز کے جدید کمپیوٹرائز سسٹم والے پھاٹکز بنائے جائیں گے اس ضمن میں معلوم ہوا ہے کہ صوبے میں ریلوے حادثات کی راک تھام، بغیر پھاٹک ریلوے کراسنگ کے سروے کیلئے ہوم سیکرٹری پنجاب میجر (ر) اعظم سلیمان خان کی سربراہی میں ایک خصوصی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے جس میں سیکورٹری بلدیات، سیکرٹری مواصلات و تعمیرات مشتاق احمد اور ایڈیشنل آئی جی ٹریفک پولیس پنجاب شیخ نسیم الزمان ممبر ہوں گے۔ کمیٹی نے سروے کرواکر قانون کے مطابق ضروری اقدامات اور تجاویز پر مبنی رپورٹس وفاقی حکومت کوبھجوائی گی وفاق اس ضمن میں اپنی سفارشات تیر کرکے ریلوے حکام کو بھجوائے گا۔ بتایا گیا ہے کہ ماضی میں بھی پنجاب حکومت نے سابق ہوم سیکرٹری ندیم حسن آصف کی سربراہی میں سروے کراکر رپورٹ وزارت ریلوے کو بھجوائی تھی جسے سابق حکومت کے ریلوے وزیر غلام احمد بلور نے نامکمل قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا تھا اب دوبارہ وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کی ہدایت پر پنجاب حکومت نے صوبے کے تمام کھلے ریلوے پھاٹکوںکا ازسر نو سروے کرنے کا فیصلہ کیا ہے تاہم اس ضمن میں پنجاب حکومت کے ذرائع کا کہنا ہے کہ وہ سابق ہوم سیکرٹری ندیم حسن آصف کی سربراہی میں پرانے سروے کا بھی جائزہ لے سکے گی۔ کمیٹی صوبے میں اس حوالے سے ریلوے حکام سے بات چیت کرنے میں بااختیار ہوگی اسے وزارت ریلوے کا مکمل تعاون ہوگا۔ حکومتی ذرائع کا کہنا ہے کہ سروے رپورٹ کے بعد کھلے پھاٹکوں پر کراسنگز کے لئے ریلوے حکام کے ساتھ پنجاب ٹریفک پولیس کے اہلکار بھی تعینات کئے جائیں گے۔ محکمہ داخلہ ذرائع کا کہنا ہے کہ اس سروے میں ریلوے پھاٹیکوں کی کمپیوٹرائزڈ نمبرنگ ہوگی اور اس امر کا فیصلہ ریلوے حکام کریں گے کہ جدید سگنلز سسٹم کے تحت کراچی طرز کے ریلوے پھاٹکوںکن مقامات پر لگائے جائیں۔

مزید : قومی


loading...