سائیکل چوری کا جھوٹا مقدمہ،ایس ایچ او گرین ٹاﺅن کے خلافکارروائی کا حکم

سائیکل چوری کا جھوٹا مقدمہ،ایس ایچ او گرین ٹاﺅن کے خلافکارروائی کا حکم

لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج عبدالقیوم خان نے 9سالہ بچے کے خلاف سائیکل چوری کا جھوٹا مقدمہ درج کرنے پر ایس ایچ او گرین ٹاﺅن شریف سندھو کے خلاف سی سی پی او لاہور کو کارروائی کا حکم دے دیا ہے فاضل عدالت میں ہنجر وال کی رہائشی صغریٰ بی بی کی طرف سے دائر حبس بے جا کی درخواست میں اپنے وکیل ملک افتخار اعوان کی وساطت سے موقف اختیار کررکھا ہے کہ گرین ٹاﺅن پولیس نے سلیمان کے والد کے خلاف مقدمہ درج کیا تھا سلیمان کے والد کی علاقے کے لوگوں سے مقدمہ بازی چل رہی ہے جس کی بنیاد پر مخالفین نے 9 سالہ بچے کے خلاف بھی سائیکل چوری کا جھوٹا مقدمہ درج کروا دیا ہے پولیس نے بچے کو غیر قانونی طور پر حبس بے جا میں رکھا ہوا ہے قانون کے مطابق نابالغ بچے پر مقدمہ درج نہیں کیا جا سکتا عدالت بچے کو بازیاب کرانے کا حکم دے جس کے بعدعدالتی حکم پر بیلف نے بچے کو گرین ٹاﺅن پولیس کی حراست سے بازیاب کرا کر عدالت میں پیش کیابیلف نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ بچے کے خلاف سائیکل چوری کا مقدمہ درج ہے ایڈووکیٹ افتخار اعوان نے عدالت کو بتایا کہ بچے پر سائیکل چوری کا مقدمہ پولیس کی بد نیتی ظاہر کرتا ہے عدالت نے ریکارڈ دیکھنے کے بعد بچے کو ماں کے حوالے کر دیا جبکہ سی سی پی او لاہور کو حکم دیا ہے کہ 9 سالہ بچے کے خلاف جھوٹا مقدمہ درج کرنے پر ایس ایچ او شریف سندھو کے خلاف کارروائی کی جائے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...