مسئلہ کشمیر پر بھارت اور پاکستان کے درمیان مذاکرات جاری ہیں اور رہیں گے سلمان خورشید

مسئلہ کشمیر پر بھارت اور پاکستان کے درمیان مذاکرات جاری ہیں اور رہیں گے ...

                    نئی دہلی(آن لائن) بھارتی وزیر خارجہ سلمان خورشید نے کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر پر بھارت اور پاکستان کے درمیان مذاکرات جاری ہیں‘ پاکستانی فوج کے سربراہ کا کشمیر بارے حالیہ بیان غیر ذمہ دارانہ تھا‘ جنرل راحیل کو اپنے ملک پر توجہ مرکوز کرنی چاہئے جہاں سرعام دہشت گردی جاری ہے۔ بھارتی میڈیا کے مطابق اپنے ایک انٹرویو میں بھارتی وزیر خارجہ نے کہا کہ بھارت اپنی حدود کا تحفظ کرے گا تاہم پڑوسی ممالک کیساتھ بہتر تعلقات کو یقینی بنانے کی کوششیں بھی جاری رہیں گی۔ انہوں نے کہا کہ بھارت اپنے اندرونی معاملات میں کسی ملک کو مداخلت کی اجازت دیتا ہے اور نہ ہی کسی کے اندرونی معاملات میں مداخلت کا عادی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر کے معاملات پر بھارت اور پاکستان کے درمیان مذاکرات جاری ہیں اور اس سلسلے کو بند نہیں کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ مذاکرات کو ہر سطح پر کامیاب بنانے کی ہرممکن کوشش کی جائے گی۔ کشمیر کے معاملے پر پاکستانی چیف آف آرمی سٹاف جنرل راحیل شریف کے حالیہ بیان کو ناقابل قبول قرار دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ فوجی سربراہ نے کشمیر کے حوالے سے غیر ذمہ دارانہ بیان دیا ہے کیونکہ پاکستان یہ نہیں کہہ سکتا کہ کشمیر اس کی شہ رگ ہے۔ انہوں نے کہاکہ ایسے بیانات دونوں ممالک کے درمیان معاملات میں تلخیاں پیدا کرسکتے ہیں‘ ساتھ ہی انہوں نے مزید کہا کہ ایسے بیانات سے تناﺅ کی کیفیت پیدا ہوجاتی ہے۔ انہوں نے جنرل راحیل شریف سے مخاطب ہوتے ہوئے کہا کہ انہیں اپنے ملک کی صورتحال پر توجہ مرکوز کرنی چاہئے جہاں کھلے عام دہشت گردی جاری ہے۔ ساتھ ہی کشمیر کے اندر بھی سرحد پار سے ہی دہشت گردی کو فروغ دیا جارہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ حالات کو دیکھتے ہوئے ہمیں کئی ایک معاملات پر توجہ مرکوز کرنا ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ ایسے نازک مسائل پر فوج کو لب کشائی کرنے کی ضرورت نہیں ہے کیونکہ سول انتظامیہ ان معاملات سے نمٹنے کی کوشش کررہی ہے

سلمان خورشید

 

مزید : علاقائی


loading...